Aanchal May 15

حمد و نعت

راومظہر الیاس/بہزاد الکھنوی

حمد باری تعالیٰ

تو نہ ہو تو سب کا جینا ہوجائے دشوار
شکر ہے مولا تیری ذات ہے سب کی پالن ہار
جن و انس‘ ملائک اور یہ سورج چاند تارے
تیرے کارن قائم صحرا‘ دریا اور کہسار
ایسے لفظ عطا کر مجھ کو عزت عظمت والے
جن سے کروں ہمیشہ مولا تیرا ذکر اذکار
جہاں جہاں بھی نظر ہے جاتی تیری شان کے جلوے
ہر اک شے سے جھلک رہا ہے مولا تیرا پیار
اپنا حبیبﷺ دیا ہے ہم کو تیرا ہے احسان
ان سے بڑھ کر کون ہے مولا امت کا غم خوار

رائو مظہر الیاس…

نعت رسول مقبول صلی اللہ علیہ وسلم

مری چشمِ آرزو کی جو ہے آرزو مدینہ
مرا حال کچھ نہ پوچھو کہ ہے چار سُو مدینہ
مری ہر صدا کا مطلب مری بے خودیٔ الفت
پسِ گفتگو مدینہ سرِ گفتگو مدینہ
مرے رہبروں سے کہہ دو کہ مجھے نہ آکے چھیڑیں
کہ ہے میری جستجو کیا مری جستجو مدینہ
یہ کمالِ جستجو ہے کہ کمالِ آرزو ہے
جہاں بند آنکھ کرلی ہوا روبرو مدینہ
ہوا جب سے عشق احمدصلی اللہ علیہ وسلم مرے دل میں جلوہ افگن
مرے دل کا حال یہ ہے کہ ہے مُو بمومدینہ
ہوں عجیب کشمکش میں کوئی راز یہ بتادے
کہ مدینہ رُو ہے کعبہ کہ ہے کعبہ رُو مدینہ
مرے جذبِ شوق یوں توتجھے پُر اثر میں کہہ دوں
ترا ہوا میں جب ہی قائل کہ دکھائے تُو مدینہ

بہزاد لکھنوی…

Show More

Check Also

Close
Back to top button
error: Content is protected !!
×
Close