Aanchal Jun-18

درجواب آں

مدیرہ

صائمہ مشتاق… بھاگٹا نوالہ‘ سرگودھا
عزیزی صائمہ! شاد آباد رہو‘ دنیا میں اچھے برے ہر طرح کے لوگ ہوتے ہیں‘ ان میں ایسے لوگ بھی ہیں جو دوسروں کے دکھ درد کو اپنا سمجھتے ہوئے ان دکھوں کا مداوا کرنے کی کوشش بھی کرتے ہیں۔ آپ کی محبت اور والہانہ جذبات بے حد قابل قدر ہیں اور ہم آپ کے مشکور ہیں۔ آئینہ میں بہت سی بہنوں کے تبصرے صرف صفحات کی کمی کی وجہ سے شامل ہونے سے محروم رہتے ہیں۔ انہیں رد نہیں کیا گیا بلکہ یہی کوشش ہے کہ آہستہ آہستہ سب کو شامل کرلیا جائے‘ اسی لیے ’جاری ہے‘ بھی لکھا تھا آخر میں شاید آپ کی نظر سے نہیں گزرا‘ اس بار آپ کا تبصرہ شامل ہے۔ آنچل کی پسندیدگی پر بے حد مشکور ہیں۔ اپنی آرأ سے یونہی آنچل و حجاب کو سنوارتی رہا کریں۔ کہانی کے لیے تھوڑا انتظار کرلیں ہوسکتا ہے وہاں دوسرے ادارے سے آپ کو جلد جواب مل جائے۔ بہ صورت دیگر آپ کہانی بھیج دیجیے گا۔ امید ہے تشفی ہوپائے گی۔

پرنسز انائیا… مانسہرہ
ڈیئر پرنسز! آنچل میں خوش آمدید۔ آپ کی نگارشات اور پیغام موصول ہوگئے ہیں۔ ان شاء اللہ جلد شامل کرنے کی کوشش کریں گے۔ اس بات کا خیال رکھیں کہ ہر سلسلہ کے لیے اگلے صفحے کا استعمال کریں اور اپنا اور شہر کا نام ضرور لکھیں۔ امید ہے آئندہ بھی بزم آنچل میں شرکت کرتی رہیں گی۔ اللہ سبحان و تعالیٰ آپ کو بہت سی کامیابیاں عطا فرمائے‘ آمین۔

نوشابہ زینت… ضلع گجرات
ڈیئر نوشابہ! سدا خوش رہیں‘ آپ کا اور آنچل کا ساتھ کئی سالوں پر محیط ہے‘ جان کر خوشی ہوئی۔ ان سالوں میں آپ خاموش قاری کی حیثیت سے آنچل سے وابستہ رہیں اور آج یہ شرکت بہت اچھی لگی۔ آپ کی کہانی پڑھی‘ لیکن انداز تحریر کچھ کمزور لگا۔ پھر آپ نے خود بھی کہا کہ آپ بچوں کی کہانیاں لکھتی رہی ہیں‘ بچوں کی کہانیاں لکھنے کا انداز آنچل کے انداز سے بالکل مختلف ہے۔ اس لیے پہلے آنچل اور حجاب میں شائع ہونے والی کہانیوں کا انداز تحریر بغور سامنے رکھیں‘ اس کے بعد قلم اٹھائیں‘ امید ہے کوشش جاری رکھیں گی۔ آپ کا پیغام اس بار شامل کرلیا گیا ہے۔

طیبہ سعید… گجرانولہ
گڑیا طیبہ! سدا شاد رہو۔ آپ کا نامہ موصول ہوا‘ جس میں آنچل کے حوالے سے تجویز پیش کی گئی ہیں جو کسی بھی صورت قبول نہیں کی جاسکتی۔ پہلی بات اشتہارت کم کرنے کی صورت میں نقصان ادارے کا ہوگا اور ویسے بھی بہت سے قطار میں ہیں‘ وجہ صفحات کی کمی۔ دیگر سلسلوں کے صفحات کم کیے گئے ہیں اور جن سلسلوں کو آپ بند کرنے کا کہہ رہی ہیں اس حوالے سے پہلے آپ اپنی قاری بہنوں سے بات کرلیں کہ ان کی کیا رائے ہے۔ سب کی طرف سے مشترکہ رائے سے ہی ہم کوئی قدم اٹھا پائیں گے۔

رقیہ ناز… ضلع وہاڑی
ڈیئر رقیہ! شادو آباد رہو‘ محبت اور چاہت سے بنایا گیا خوب صورت عید کارڈ آپ کی جانب سے موصول ہوا‘ جو آنچل و حجاب سے آپ کی محبت کا بخوبی اظہار ظاہر کررہا ہے۔ آپ کے اس تحفے پر بے حد مشکور ہیں۔ آپ کو بھی رمضان اور عید کی پیشگی مبارک باد۔ یاسمین نشاط اور نازیہ کنول نازی تک آپ کی تعریف ان سطور کے ذریعے پہنچا رہے ہیں۔

اقراء حفیظ… کے ٹی ایس‘ ہری پور
عزیزی اقرأ! جگ جگ جیو‘ آپ کی تحریر اور آرٹیکل موصول ہوگیا ہے۔ ابھی ان کے متعلق کچھ بھی کہنا قبل از وقت ہوگا۔ آپ کی تحریریں تاخیر سے موصول ہونے کے سبب ابھی پڑھی نہیں گئیں۔ جلد پڑھ کر اپنی رائے سے آگاہ کریں گے۔ اگر حجاب یا آنچل کے معیار کے مطابق ہوئیں تو اپنی جگہ بنالیں گی۔

ہما خان… کوٹ رادھا کشن
ڈیئر ہما! جیتی رہو‘ آپ کی ارسال کردہ تحریر ’’بابا ٹیلر‘‘ اور آرٹیکل کے لیے معذرت خواہ ہیں۔ کہانی میں موضوع کا چنائو ٹھیک نہیں لگا‘ کسی اور موضوع کے ساتھ محنت جاری رکھیں۔ آپ کا مشاہدہ اگر وسیع ہے تو آپ دیگر موضوعات پر بھی طبع آزمائی کرسکتی ہیں‘ اس ناکامی کو اپنے لیے کامیابی کا زینہ بنانے کی کوشش جاری رکھیں۔ امید ہے مزید اچھا اور بہتر لکھ سکیں گی۔ اللہ سبحان و تعالیٰ آپ کو کامیابی عطا فرمائے‘ آمین۔

فائزہ بھٹی… پتوکی
پیاری فائزہ! سدا آباد رہو‘ آپ کا آرٹیکل ’’مائیں ایسی ہوتی ہیں‘‘ موصول ہوا‘ پڑھ کر اندازہ ہوا کہ اب آپ کی تحریر میں بہتری آرہی ہے‘ لیکن موضوع مناسب نہ ہونے کی بنا پر تحریر اپنی جگہ بنانے میں ناکام ٹھہری‘ جو منظر نگاری آپ نے کی وہ ہمارے ذہن کے لیے تو مناسب ہے لیکن اشاعت کے لیے موزوں نہیں کیونکہ ہر ایک اپنے حساب سے سوچتا اور سمجھتا ہے۔ اس لیے اس موضوع کو قلم بند کرنے کے بجائے ہلکے پھلکے موضوع کو قلم بند کریں۔ تحریر پر گرفت اسی طرح قائم رکھیں امید ہے تشفی ہوگئی ہوگی۔

یمنیٰ نور… فیصل آباد
ڈیئر یمنیٰ! سدا آباد رہو‘ آپ کی تحریر ’’محافظ‘‘ موصول ہوئی‘ پڑھ کر حجاب کے لیے منتخب کرلی۔ انداز تحریر اور موضوع دونوں ہی منفرد ہونے کی بنا پر اپنی جگہ بنا گئے اور جلد ہی حجاب میں شامل ہوکر آپ کو مسرت بخشے گی۔ جب تک کے لیے انتظار کی گھڑیاں تھامے رکھیں۔

گلشن چودھری… گجرات
عزیزی گلشن! شاد رہو‘ آپ سے نصف ملاقات بہت اچھی لگی۔ اگر آپ دلی تسکین کی خاطر آنچل کے سلسلوں میں شرکت کرتی ہیں تو ہماری بھی کوشش ہوتی ہے کہ جلد از جلد سب کی نگارشات کو شامل کرلیں۔ آپ کا پیغام اس بار شامل ہے امید ہے دیکھ کر خوشی ہوگی۔ کہانی لکھنے کے لیے اپنا مطالعہ وسیع کریں اوردیگر رائٹرز کے انداز کو سامنے رکھیں پھر قلم اٹھائیں۔

فرحی نعیم… کراچی
پیاری فرحی! جیتی رہو‘ آپ کی تحریر ’’بے نشاں منزل‘‘ موصول ہوئی۔ پڑھ کر اندازہ ہوا کہ ابھی آپ کو مزید محنت کی ضرورت ہے۔ بے شک تحریر میں حقیقت کا رنگ چھلکتا ہے لیکن مثبت پہلو سے بھی قاری کو مطمئن کرنا ہوتا ہے‘ ورنہ ذہن پر بوجھ سا محسوس ہوتا ہے۔ اس لیے تحریر لکھتے ہوئے ان باتوں کا خیال ضرور رکھا کریں‘ امید ہے تشفی ہوگئی ہوگی اور آئندہ ان باتوں کو مدنظر رکھتے ہوئے تحریر ارسال کریں گی۔

سدرہ اعجاز… نامعلوم
ڈیئر سدرہ! سدا شاد رہو‘ آپ کا ناول ’’تم سے تم تک‘‘ پڑھ ڈالا۔ ناول پڑھ کر اندازہ ہوا کہ آپ میں لکھنے کی صلاحیت موجود ہے لیکن بے جا طوالت کے سبب کہانی میں الجھائو پیدا ہوگیا ہے اور آپ کی گرفت بھی کمزور پڑتی محسوس ہوئی۔ فی الحال مختصر موضوع پر طبع آزمائی کرکے افسانہ اور ناولٹ کی طرف توجہ مرکوز کریں اور جب لکھنے کے فن میں عبور حاصل ہوجائے تو پھر اس طرف آئیں۔ امید ہے اس ناکامی کو اپنے لیے کامیابی کا زینہ بنائیں گی۔

شگفتہ برکت… خانیوال
پیاری شگفتہ! جگ جگ جیو‘ آپ کی نظم ’’معصوم زینت‘‘ کے نام سے موصول ہوئی اور متعلقہ شعبہ میں بھیج دی ہے۔ اب انتظار کے لمحات گنتے امید رکھیں‘ اگر قبولیت کا درجہ حاصل کر گئی تو جلد ہی آنچل میں شامل کرلیں گے۔ کوشش کیا کریں کہ اپنے حالات نظم و تحریر کی صورت ارسال نہ کریں کیونکہ جہاں اچھائی پھیلانے کا حکم ہے وہیں برائی کو بھی دبانے کا کہا گیا ہے۔ امید ہے اس بات کو مدنظر رکھتے ہوئے آئندہ خیال رکھیں گی۔

ریحانہ اعجاز… کراچی
ڈیئر ریحانہ! سدا سہاگن رہو‘ آپ کی طرف سے خوب صورت شاعری کی کتاب ’’دعا دیتے ہیں لفظ میرے‘‘ موصول ہوئی۔ اس کامیابی پر مبارک باد وصول کریں۔ بے شک شاعری ایک مشکل صنف ہے اور جس طرح ایک شاعر اس میں اپنے احساسات بیان کرتا ہے وہ بھی کمال ہے اللہ سبحان و تعالیٰ آپ کو مزید کامیابیاں عطا فرمائے آمین۔

نزہت پروین… نامعلوم
بہن نزہت! جیتی رہو‘ آپ کی تحریر ’’من کی موجی عشق توجی‘‘ موصول ہوئی۔ پڑھ کر اندازہ ہوا کہ ابھی آپ کو مزید محنت کی ضرورت ہے۔ انداز تحریر اور موضوع کے ساتھ آپ کا بیانیہ بھی کمزور تھا‘ جس کی بنا پر تحریر اپنی جگہ بنانے میں ناکام ٹھہری‘ اس لیے پہلے نامور مصنفین کی تحریروں کا بغور مطالعہ کریں اور مشاہدہ بھی وسیع کریں تاکہ لکھنے میں مدد مل سکے۔ امید ہے تشفی ہوگئی ہوگی۔

ثانیہ مغل… سرگودھا
ڈیئر ثانیہ! سدا سہاگن رہو‘ شادی کے بعد اگرچہ زندگی بے حد مصروف ہوجاتی ہے اور دیگر مصروفیات میں اپنی ذات کے لیے وقت نکالنا بے حد مشکل ہوجاتا ہے۔ ہمیں آپ کی باتوں سے بخوبی اندازہ ہوگیا ہے‘ بہر حال آنچل کی محبت نے ایک بار پھر آپ کو اس کا حصہ بنادیا‘ جان کر خوشی ہوئی۔ کہانی پڑھ کر جلد اپنی رائے سے آگاہ کردیں گے۔ ہم اور ہمارے قارئین کوئی بھی آپ کو اتنی جلدی نہیں بھول سکتا۔ اس غلط فہمی کو ہرگز دل میں جگہ مت دیں۔ اللہ سبحان و تعالیٰ آپ کو قلمی سفر میں مزید کامیابیاں عطا فرمائے‘ آمین۔

نیلم شہزادی… کوٹ مومن
نیلم شہزادی! سلطنت آنچل میں خوش آمدید کہتے ہیں‘ خط کی ابتدائی سطور سے ہی خفگی و بیگانگی کا مظاہرہ کیا گیا۔ بہرحال شہزادی صاحبہ کا ہر انداز پسند آیا۔ لفظوں کے پیرہن میں چھپا طنز بھی عجیب لذت سے آشنا کر گیا۔ آپ کی جو تحریریں آنچل کے قید خانے میں مقید اپنی بے قدری پر شکوہ کناں ہیں اور آزادی کا پروانہ ملنے کو بے تاب ہیں تو ان کے لیے عرض ہے کہ آپ کی ایک تحریر دوہرا معیار حال ہی میں حجاب میں شائع ہوچکی ہے۔ دیگر تحریروں کو بھی رمضان اور عید نمبر سے فراغت کے بعد قفس سے نجات مل جائے گی۔ بہرحال اپنی تحریروں کے لیے آپ کی چاہت اور محبت ان سطور سے بخوبی عیاں ہوگئی۔ امید ہے اب خفگی‘ مایوسی اور ناراضی کو ترک کردیں گی اور شہزادی صاحبہ کا مزاج بھی خوشگوار ہوجائے گا۔

سیدہ صبا نوید… چینوٹ
ڈیئر صبا! سدا خوش رہو‘ آپ کی نظمیں‘ غزلیں‘ متعلقہ شعبے میں بھیج دی گئی ہیں‘ اگر معیاری ہوئیں تو اصلاح کے بعد ضرور شامل ہوجائیں گی کیونکہ اس سلسلے میں کثیر تعداد میں بہنیں شرکت کرتی ہیں‘ اس وجہ سے دیر سویر ہوجاتی ہے‘ آپ کی نظم بھی اگر پرچے کے معیار کے مطابق ہوئی تو جلد یا بدیر ضرور شائع ہوجائے گی۔ اللہ سبحان و تعالیٰ آپ کا حامی و ناصر ہو‘ آمین۔

ایمن شہزادی… ہری پور‘ ہزارہ
ڈیئر ایمن! سدا مسکرائو‘ آنچل اور آپ کے دیرینہ ساتھ کے متعلق جان کر بے حد خوشی ہوئی۔ آٹھویں کلاس سے آپ آنچل کے زیر سایہ ہیں اور اس کی کہانیوں سے زندگی کے رموز بھی سمجھتی ہیں۔ یہ ہمارے لیے خوش آئند بات ہے۔ بے شک ان کہانیوں کا مقصد بھی یہی ہوتا ہے کہ زندگی کے مختلف روپ اور ادوار کو اس انداز میں سامنے لایا جائے کہ پڑھنے والا مثبت سوچ اپنائے‘ اچھائی برائی کا فرق سمجھ سکے۔ ہر رائٹر کی تخلیق کے پیچھے یہی مقاصد کار فرما ہوتے ہیں اور ہمارا اصل مقصد بھی اصلاح کا ہے۔ جب آپ جیسے قارئین اس اصل مفہوم کو سمجھ کر آنچل کو سراہتے ہیں‘ اسے پسند کرتے ہیں تو بے حد اچھا لگتا ہے۔ آنچل کی پسندیدگی پر مشکور ہیں۔ آئندہ بھی شریک محفل رہیے گا۔

فریدہ جاوید فری… لاہور
عزیزی فریدہ! شاد و آباد رہو‘ ہمیں بخوبی اندازہ ہے کہ آپ کیسے علالت کے دوران وقت نکال کر بزم آنچل میں شرکت کرتی ہیں۔ نیرنگ خیال میں اکثر آپ کی شاعری کو جگہ بھی دی جاتی ہے اور ہمارے ساتھ ساتھ قارئین بھی آپ کی شاعرانہ صلاحیتوں کے معترف ہیں۔ بے شک آپ کی بہت سی کتابیں مارکیٹ میں آچکی ہیں اور آپ کے چاہنے والے انہیں گراں قدر سرمایہ بھی سمجھتے ہیں۔ ناول بھیجنا چاہیں تو ضرور ارسال کردیں۔ ہماری دعائیں آپ کے ساتھ ہیں۔ اللہ سبحان و تعالیٰ آپ کو صحت کاملہ عطا فرمائے اور آپ یونہی ہر بار آنچل کی رونق میں اضافے کا سبب بنتی رہیں۔ سالگرہ کی مبارک باد پیش کرنے پر مشکور ہیں۔ دعائوں کے لیے جزاک اللہ۔

تمنا بلوچ… ڈی آئی خان
عزیزی تمنا! سدا سہاگن رہو‘ مفصل خط سے آپ کے تمام حالات بخوبی واضح ہوگئے۔ گھر والوں کے ساتھ پیش آنے والے مختلف حادثے بے شک انتہائی پریشان کن بات ہے‘ لیکن مشکل کی ان گھڑیوں میں اللہ سبحان و تعالیٰ نے سب اہل خانہ کو ہمیشہ محفوظ رکھا اور ان شاء اللہ آگے بھی وہی سب کی حفاظت کرے گا۔ آپ ان حادثات کو آزمائش سمجھتے ہوئے اللہ سبحان و تعالیٰ کے قریب ہونے کی کوشش کریں گھر والوں کو بھی یہی مشورہ دیں کیونکہ صدقہ ہر مشکل اور مصیبت کو ٹال دیتا ہے۔ جہاں تک اولاد کی محرومی کا دکھ ہے تو آپ اللہ سبحان و تعالیٰ سے دعا کرتی رہیں اور مایوس مت ہوں۔ ماں ہوکر اپنی پہلی اولاد کو بھول جانا بے شک آسان نہیں‘ لیکن اس طرح ہر وقت بیٹی کے تصور میں رہ کر پریشان مت ہوں بلکہ تمام معاملہ اللہ سبحان و تعالیٰ کے سپرد کردیں۔ ان شاء اللہ وہ جلد آپ کو اولاد کی نعمت سے بھی نواز دے گا۔ اللہ سبحان و تعالیٰ سے دعا گو ہیں کہ آپ کا دامن خوشیوں سے بھردے‘ آمین۔

انعم زہرہ… ملتان
ڈیئر انعم! شاد و آباد رہو‘ آپ سے یہ نصف ملاقات بہت اچھی لگی مفصل خط سے تمام باتیں بخوبی واضح ہو رہی ہیں۔ آپ کے اندر لکھنے کی صلاحیت بخوبی موجود ہے اور اس بات کا واضح ثبوت آپ کو آنچل کے صفحات پر مل بھی چکا ہے اور کچھ لوگ ایسے ہوتے ہیں جو دوسروں کی خوبیوں کا اعتراف کرنے کے بجائے تنقید کرتے ہیں قدر دان بننے کے بجائے بے قدری کرتے ہیں اس شخص کا شمار بھی ایسے ہی لوگوں میں ہوتا ہے آپ اپنی شاعری ارسال کرتی رہیں وقتاً فوقتاً شائع ہوتی رہے گی اللہ سبحان و تعالیٰ آپ کے بھائی کو نیک و صالح اولاد سے نوازے اور آپ سب کو زندگی کی بہت سی خوشیوں سے ہمکنار کرے‘ ہماری دعا ہے کہ جلد زندگی میں آپ کو بھی محبت کرنے والے قدر دان لوگ میسر آئیں، آمین۔

سحرش … میانوالی
گڑیا سحرش! جگ جگ جیو‘ آپ کا شکایت نامہ موصول ہوا بات دراصل یہ ہے کہ شاعری ہمیں کثیر تعداد میں موصول ہوتی ہے اور فوراً ہی اسے متعلقہ شبعے میں ارسال کردیتے ہیں وہیں سے رد و قبولیت کا درجہ پا کر اپنی جگہ آنچل میں بنا لیتی ہے آپ کی شاعری اگر قابل اشاعت ہوئی تو انتظار لازمی ہے باقی ناقابل اشاعت کا ہم ذکر نہیں کرتے کہ کہیں مایوسی میں آپ لکھنا ہی نہ چھوڑ دیں اتنا ضرور کرین کہ ایک وقت میں ایک ہی نظم و غزل ارسال کیا کریں، جب وہ اپنی جگہ بنا لے تو دوسری ارسال کریں امید ہے اس بات کو مدنظر رکھتے ہوئے عمل بھی کریں گی۔

ناقابل اشاعت:

انتخاب‘ آنچل کی سالگرہ پر مشاعرہ‘ اک مرگ مسلسل‘ برک صحرا‘ پڑھ کلمہ ایک خدا کا‘ اردو اور پاکستان‘ حیا والی لڑکی‘ بند دروازے‘ سزا‘ آنچلی سالگرہ کی تقریب‘ رشتے(آرٹیکل)‘ قورمہ‘ آخر ایک دن‘ مائیں ایسی ہوتی ہیں‘ انوکھا لاڈلہ‘ سائیں لوگ‘ محبت کا سراب‘ اپنے اپنے ہوتے ہیں‘ بے نشاں منزل‘ کانوںکا کچا‘ ضرورت سے ہنر تک‘ کرب‘ مسکراہٹ‘ بکھیرتی عید‘رمضان میں اسراف‘ پنک سوٹ‘ پیا من بھائے‘ شہید ان وطن کو سلام‘ میں تیری سائبان‘ نوید زندگی‘ لو یو حسیب‘ کاش میں وہ ہوتا‘ نصیباً‘ وقت اپنے‘ شوہر کا مان۔

قابل اشاعت:

محرم ذات‘ محافظ‘ ہم یوں ملے‘ رنگ ریز‘ مجھے خوابوں میں رہنے دو‘گھر کی ملکہ‘ تم میری عید کے چاند‘ کب اشک گہرا ہوگا‘ ذات دی کوڑھ کرلی۔

Show More

Check Also

Close
Back to top button
error: Content is protected !!
×
Close