Aanchal Nov-17

ہمارا آنچل

ملیحہ احمد

آسیہ عروج
پیارے پیارے آنچل پڑھنے اوڑھنے والوں کو مابدولت آسیہ عروج کا پیار بھرا سلام۔ السلام علیکم کیسی ہو دوستو! یقینا مزے میں ہوں گی ہر ماہ اپنی دوستو کا تعارف پڑھتی ہوں سوچا کیوں نہ اس بار آپ لوگوں سے اپنا تعارف ہی کروادوں۔ نام آسیہ پیار سے سب عاشی کہتے ہیں ماشاء اللہ سے میرے پانچ بھائی ہیں اور چار بہنیں ہیں‘ میرا نمبر چھٹا ہے۔ امی ابو اور بہن بھائیوں سے بہت پیار ہے‘ بھائی منظر اور بابر بھائی اور آپی ساجدہ آپی راشدہ اور فرزانہ کی شادی ہوچکی ہے۔ جاوید بھائی‘ عمران بھائی کی (اور میری) منگنی ہوچکی ہے۔ بابر بھائی اور بھابی خالدہ کے دو بیٹے اور ایک بیٹی ہے جو کہ سب کے بہت لاڈلے ہیں ‘ آپ سب دوستیں بھی دعا کریں کہ اللہ تعالیٰ بھائی منظر اور بھائی عصمت کو اولاد سے نوازے اور آپی ساجدہ‘ راشدہ کے لیے بھی پلیز اور فرزانہ کی پیاری سی بیٹی ہے سعدیہ جو کہ دو ماہ کی ہے آپ بھی سوچ رہے ہوں گے یہ تو اپنے گھر والوں کا تعارف کروارہی ہے‘ بتاتی چلوں کہ میرا تعارف تو میرے گھر والوں سے مکمل ہوتا ہے۔اب بات ہوجائے کچھ اپنے بارے میں کلرز میں بلیک ‘ سی گرین‘ پرپل پسند ہے۔ جیولری میں سب کچھ ہی اچھا لگتا ہے‘ شادی بیاہ ہو تو ویسے تو سادگی اچھی لگتی ہے‘ خوشبو میں گلاب اور چنبیلی کی خوشبو اچھی لگتی ہے اور بہت زیادہ حساس ہوں۔کسی کا دکھ برداشت نہیں کرسکتی‘ کہانیوں میں جب غمگین سا سین ہو تو رونا آجاتا ہے۔ فارغ وقت میں میری بہترین تفریح ڈائجسٹ پڑھنا ہے‘ گرمیوں کی لمبی دوپہروں میں اور سردیوں کی لمبی اور ٹھنڈی راتوں میں رسالے پڑھنا بہت پسند ہے۔ آنچل میرا پسندیدہ رسالہ ہے‘ ہر ماہ آنچل کا شدت سے انتظار رہتا ہے‘ ہماری اصلاح کے لیے یہ رسائل جو ہیں جن سے ہم بہت کچھ سیکھتے ہیں‘ یہ اسٹوریز ہمیں سکھاتی ہیں کہ ہمیں زندگی کس طرح گزارنی چاہیے کون سی بات ہماری زندگی پر اچھا تاثر ڈالے گی۔ پسندیدہ رائٹر تو بہت ساری ہیں‘ کسی ایک کا نام لکھوں تو ناانصافی ہوگی۔ شاعری کی جنون کی حد تک دیوانی ہوں‘ نازیہ کنول نازی اور وصی شاہ‘ پروین شاکر کی شاعری بہت زیادہ پسند ہے۔ ہم لوگ گائوں میں رہتے ہیں‘ اللہ کا شکر ہے کہ ہمارے گھر میں ہر وہ سہولت موجود ہے جو کہ شہر میں ہوتی ہے۔ زندگی میں کسی چیز کی کمی نہیں ہے۔ گھر میں امی ابو اور اکرام بھائی ہوتے ہیں اور میں بھی‘ چاروں بھائی اپنے کام کے سلسلے میں دوسرے شہروں میں ہوتے ہیں۔ جب سب بہن بھائی آتے ہیں تو عید کا سماں لگتا ہے۔ 21 سال پہلے اس دنیا میں تشریف لائی‘ مارچ کی 3 تاریخ کو‘ تعلیم اتنی خاص نہیں۔ میری بیسٹ فرینڈز بشریٰ‘ شازیہ‘ صباء اور میری آپی ساجدہ بھی ہے جس سے میں اپنے دل کی ہر بات کہہ دیتی ہوں اور تمام کزن شبانہ‘ شمائلہ‘ نازیہ ماریہ ‘ارے سب کے نام لکھوں گی تو بہت لمبا ہوجائے گا‘ سب سے بہت اچھی بنتی ہے اور میں کوکنگ بہت اچھی کرلیتی ہوں سب کہتے ہیں۔ گھر کا کام میں خود کرتی ہوں امی کو نہیں کرنے دیتی‘ کوئی مجھ سے جھوٹ بولے تو برداشت نہیں ہوتا‘ میں چاہتی ہوں جیسے میں ہر ایک سے مخلص ہوں ایسے ہی سب ہوں۔ آج تک کسی کا برا نہیں چاہا اور جب غصہ آتا ہے تو کوشش کرتی ہوں کہ کنٹرول کرلوں اور نہ کروں تو چیزوں پر نکالتی ہوں اور کھانے میں ویسے تو ہر چیز کھالیتی ہوں لیکن جو فیورٹ ہے اچار گوشت ‘ شملہ مرچ‘ بریانی‘ میٹھے میں کسٹرڈ پسند ہے اور امبر گل تم سے یہ کہنا چاہوں گی کہ تمہاری امی کی وفات کا مجھے بے انتہا دکھ ہوا‘ اللہ تعالیٰ تم کو صبر عطا فرمائے‘ پاکستانی ڈرامے شوق سے دیکھتی ہوں‘ ہم ٹی وی پر فرحت اشتیاق کو دیکھا‘ آپی فرحت آپ بہت اچھی لگ رہی تھیں۔ مجھے اپنے پیارے نبی صلی اللہ علیہ وسلم سے اور ان کی احادیث سے بے انتہا پیار ہے آخر میں بس یہ ہی کہنا چاہوں گی کہ اپنے ماں باپ اور اپنے سے وابستہ ہر اس رشتے کی قدر کریں میری باتیں آپ کو کیسی لگیں دوستوں اپنی آراء سے ضرور آگاہ کیجیے گا‘ اوکے دوستو اللہ حافظ‘ دعائوں میں یاد رکھیے گا‘ اللہ حافظ۔
زینب دلبر اعوان
ہم بہت مان و ارمان سے اپنا تعارف لے کر آئے ہیں اس ناچیز کا محبتوں بھرا سلام آنچل سے وابستہ تمام لوگوں کے نام عرض کرتی ہوں۔ امید ہے آپ سب لوگ ٹھیک ٹھاک ہوں گے‘ آنچل میں نے 2016 ء میں پہلی بار پڑھا اور کافی اچھا لگا اس سے پہلے کوئی بھی ڈائجسٹ ہاتھ لگتا پڑھ لیا کرتی تھی۔ آنچل سے مجھے کافی کچھ سیکھنے کو ملا اس لیے اب صرف آنچل تک ہی محدود ہوکر رہ گئی ہوں تو اب آتے ہیں اپنے تعارف کی طرف۔ میری تاریخ پیدائش 23 مارچ 2000ء ہے‘ اسٹار ایریس ہے ویسے میں ان پر بہت ہی کم یقین رکھتی ہوں کیونکہ انسان کے ساتھ وہی کچھ ہوتا ہے جو اللہ نے اس کی تقدیر میں لکھ دیا ہو۔ ہم آٹھ بہن بھائی ہیں‘ مابدولت کا نمبر پانچواں ہے‘ مجھ سے بڑی دو بہنیں ایک بھائی شادی شدہ ہے۔مجھے اپنی بھتیجی سے بہت پیار ہے وہ اس عید پر ہمارے لیے اپنے ساتھ ڈھیر ساری خوشیاں لائی ہے‘ گھر میں سب سے چھوٹی ہونے کے ساتھ ساتھ گھر بھر کی لاڈلی بھی ہے اینڈ (آئی لو امثال)۔ فرسٹ ائیر کی طالب علم ہوں‘ اعلیٰ سے اعلیٰ تعلیم حاصل کرنے کا بہت شوق ہے اپنی فیملی اور اپنے پیارے وطن کے لیے کچھ کر دکھانا چاہتی ہوں۔ ائیرفورس میں جانے کا جنون کی حد تک شوق ہے اس لیے دعا کیجیے گا کہ میرا یہ شوق پورا ہوسکے۔ اب بات ہوجائے خوبیوں اور خامیوں کی تو پہلے خامیوں کی تو بہت جلد غصہ آجاتا ہے (پتا نہیں کیوں) ضدی بہت ہوں(گھر والوں کی زبانی) کھانا پکانا نہیں آتا‘ کوشش تو بہت کرتی ہوںمگر پکا نہیں پاتی۔ اب آتے ہیں خوبیوں کی طرف تو پانچ وقت کی نماز پڑھنے کی کوشش کرتی ہوں اور کافی حد تک اس میں کامیاب بھی رہتی ہوں۔ مہندی بھی لگالیتی ہوں‘ بہت حساس دل ہوں کسی کو دکھی نہیں دیکھ سکتی۔ شعر و شاعری سے بہت لگائو ہے یوں ہی سمجھ لیجیے کہ وراثت میں ملی ہے۔ سردیوں میں آئس کریم‘ مچھلی کھانا بہت اچھا لگتا ہے‘ سردیوں کا موسم بہت اٹریکٹ کرتا ہے۔ کلرز میں مجھے پنک‘ گرین اسکائے بلو بہت اچھا لگتا ہے‘ بارشوں کا موسم بھی بہت پسند ہے۔ بارش میں بھیگنا اوربارش کے بعد کے منظر کو دیر تک دیکھنا تو اور بھی زیادہ اچھا لگتا ہے۔ پھولوں میں مجھے گلاب اور موتیے کی خوشبو پسند ہے‘ کھانے میں بریانی‘ گوبھی اور گوار پھلی بہت پسند ہے۔ جیولری بہت پسند ہے‘ پہنتی بہت ہی کم ہوں‘ جس میں مجھے رنگ اور بریسلیٹ بہت پسند ہے موڈ ہوا توپہن بھی لیتی ہوں۔ دنیا میں سب سے زیادہ حسین والدین کا مقدس رشتہ ہے‘ گفٹ دینا پسند کرتی ہوں کیونکہ اس سے محبت بڑھتی ہے۔ مجھے مکّہ معظمہ اور مدینہ منورہ دیکھنے کا بہت شوق ہے اور آپ سب دعا ضرور کیجیے گا کہ میرا یہ شوق جلد از جلد پورا ہوسکے‘ میرا پسندیدہ شہر اسلام آباد اینڈ مری ہے۔ سمندر کو دور سے دیکھنا بہت اچھا لگتا ہے‘ سچے اور کھرے لوگ بہت پسند ہیں‘ منافق لوگوں سے سخت نفرت ہے میں بڑی خوش مزاج بھی ہوں موڈ ہوا تو خود بھی ہنس لیا اور دوسروں کو بھی ہنسالیا۔ کپڑوں میں فراک اور چوڑی دار پاجامہ بہت پسند ہے۔ مجھے کالج لائف بہت پسند ہے اور اتنا ہی انجوائے بھی کرنا چاہتی ہوں اگر رائٹرز کی بات ہوجائے تو نازیہ کنول نازی‘ سمیرا شریف طور‘ فاخرہ گل کی اسٹوریز بہت پسند ہیں اور ان سے دوستی کرنا اور ملنا تو میرا خواب ہے۔ چاند کو دیر تک دیکھنا بہت ہی اچھا لگتا ہے اور سردیوں میں چاندنی راتیں تو اور بھی زیادہ اچھی لگتی ہے۔ فروٹ آم‘ انگور اور مالٹے بہت پسند ہیں۔ میٹھے میں کھیر کسٹرڈ بہت اچھا لگتا ہے‘ سنگرز میں ارجیت سنگھ‘ راحت فتح علی خان اور عاطف اسلم کے گانے بہت پسند ہیں۔ بہت کھلے دل کی مالک ہوں ‘ فضول خرچ بالکل بھی نہیں ہوں۔خوب صورت چیزیں بہت اٹریکٹ کرتی ہیں خواہ وہ کوئی خوب صورت منظر ہو یا کوئی انسان۔ کھیلوں میں کرکٹ کھیلنا بہت پسند ہے‘ میں حمیرا رشید‘ صفانا خان‘ ماہم نور انصاری‘ عکس فاطمہ‘ پروین افضل شاہین‘ نور المثال شہزادی‘ انعم برنالی‘ نجم انجم اعوان‘ ناہید چوہدری‘ میزاب قصور‘ ارم کمال‘ کرن شہزادی باقی جن کا نام رہ گیا ہے میں ان سب سے دوستی کی خواہش مند ہوں اگر کوئی مجھ سے دوستی کرنا چاہے تو میری طرف سے ویلکم اگر آپ کو میرا تعارف اچھا لگا تو ضرور بتایئے گا‘ اپنا خیال رکھیے گا او ر ہمیشہ مجھے دعائوں میں یاد رکھیے گا‘ کوئی غلطی ہوگئی ہو تو پلیز معاف کردیجیے گا‘ اس کے ساتھ ہی اللہ حافظ۔
وزیہ سحرین
السلام علیکم و رحمتہ اللہ و برکاتہ! تمام آنچل اسٹاف اور تمام فرینڈز کو میرا محبت بھرا عاجزانہ سلام۔ کیسے ہیں آپ سب؟ امید ہے کہ سب خیریت سے ہوں گے‘ 25 دسمبر 1995ء کو اللہ تعالیٰ نے اس کھوٹ سے بھری دنیا میں مطلب پرست بے وفا سنگ دل لوگوں کو سدھارنے کے لیے مجھ معصوم اکیلی جان کو بھیج دیا۔ مما جان کہتی ہیں کہ جب تم پیدا ہوئیں تو بہت نفیس اور خوب صورت بچی تھیں (آہم) مجھے ایک خوب صورت ایکٹر وزیہ پسند تھی تو اس کے نام پر تمہارا نام رکھ دیا ‘ مجھے اپنا نام بہت پسند ہے کیونکہ میں اپنے ہم نام لوگ دنیا میں بہت کم دیکھے ہیں (ارے بھئی ہم منفرد ہیں ناں) اگر پرسنلی مجھ سے میرے بارے میں پوچھا جائے تو میں یہی کہوں گی کہ میں بہت سادہ طبیعت کی مالک ہوں‘ دل سے سب کی قدر کرتی ہوں کسی کو تکلیف پریشانی میں نہیں دیکھ سکتی میں ہر حال میں ہر ماحول میں رہنے والی لڑکی ہوں۔ ہر طرح کے حالات کے لیے خود کو تیار رکھتی ہوں اللہ کی ذات پر بھروسہ رکھتی ہوں‘ جو اللہ نے میری قسمت میں لکھ دیا وہ مجھے ضرور ملے گا۔ کسی سے بے رخی‘ غصہ یا انا میں بات نہیں کرتی کیونکہ مجھے اللہ سے بہت ڈر لگتا ہے اور میں سمجھتی ہوںکہ انسان کا ہر عمل ہر لفظ کبھی نہ کبھی اس کے آگے ضرور آتا ہے۔ میں بہت جذباتی لڑکی ہوں غصہ بہت جلدی آتا ہے اور بہت جلد اتر جاتا ہے کبھی کبھی اپنے آپ کو بہت بے بس محسوس کرتی ہوں رونے کو دل چاہتا ہے میرے دوست احباب مجھ سے کہتے ہیں وزی تم رویا مت کرو‘ کمزور دل لوگ روتے ہیں اور ہماری وزیہ تو بہت بہادر ہے‘ بہت حساس فطرت ہوں جس سے محبت کرتی ہوں اس کی بے رخی برداشت نہیں ہوتی اور کوئی مجھے اگنور کرے تو بہت غصہ آتا ہے میں اپنے ہر رشتے سے بہت مخلص ہوں لیکن افسوس دنیا میں بہت کم لوگ مجھے سمجھتے ہیں خیر محبتوں کے معاملے میں بہت خوش قسمت ہوں مجھ سے سب بہت محبت کرتے ہیں۔ میری فیملی میری فرینڈز کبھی کبھی اتنی محبت دیکھ کر گھبرا جاتی ہوں بس اللہ کا کرم ہے (آہم) میں ہر کسی پر اعتبار کرلیتی ہوں اگر بھروسہ ٹوٹ جائے تو شکوہ نہیں کرتی بس خاموشی سے چھوڑ دیتی ہوں جیو اور جینے دو پر عمل کرتی ہوں اگر پسند کا پوچھا جائے تو اللہ کی بنائی ہر چیز پسند ہے مگر مجھے پنک کلر بہت پسند ہے اور وقت میں سے مغرب کا وقت مجھے ہمیشہ اپنی سہیلی تمثیلہ کا آٹو گراف یاد آتا ہے جس پر اس نے لکھا تھا ہم روز اداس ہوتے ہیں اور یہ شام گزر جاتی ہے کسی روز شام اداس ہوگی اور ہم گزر جائیں گے اور رات کے وقت سفر کرنا اچھا لگتا ہے۔ تنہائی بھی کبھی کبھی اچھی لگتی ہے ویسے میری دادی جان کہتی ہیں کہ تم بہت بہادر ہو ہاں کبھی میں بہادر ہواکر کرتی تھی مگر اب کچھ عرصہ سے میں بہت بدل گئی ہوں کبھی میں بہت منہ پھٹ بھی ہوا کرتی تھی مگر اب ایسا کچھ بھی نہیں ہے میں کچھ کرنا چاہتی ہوں روزانہ رات کو میں روتی ہوں کہ میں نے کچھ بھی نہیں کیا اور ایک دن گزر گیا۔ میں انتہائی شدت پسند جنونی لڑکی ہوں مجھے اپنی یہ عادت بالکل پسند نہیں اور خوبی یہ کہ میں دوسروں کا دل نہیں دکھاتی گھر میں جینز پہنتی ہوں یونیورسٹی میں تو گائون پہن کر جاتی ہوں۔ میری دوستیں مجھ سے بہت محبت کرتی ہیں ثونو جانو یہ ہوسکتا ہے کہ میں تمہارا نام نہ لوں ارے ارم تم منہ نہ پھولائو تمہارا نام بھی ضرور لوگی۔ ثانی تم تو آنسو صاف کرو سحرش تم منہ بند کرو مکھی نہ چلی جائے‘ مائی ساری تمہارا بارے میں ذکر نہ کروں یہ ہوسکتا ہے جہاں تم وہاں میں جہاں میں وہاں تم اور… میرے ٹیچرز نے مجھے بہت زیادہ سپورٹ کیا۔میں دل سے ان کی بے حد مشکور ہوںاب آپ کی چھوٹی چھوٹی آنکھیں تھک گئی ہوگی‘ اجازت چاہتی ہوں ۔ نازیہ کنول بہت اچھا لکھتی ہیں دعا کیجیے گا کہ میں بھی آپ کی طرح لکھ پائوں‘ بہت جلد میری کتاب (ایک درد ہے میرے دل میں) شائع ہونے والی ہے پڑھنا مت بھولیے گا اجازت‘ اللہ حافظ۔
سیدہ رقیہ اسماعیل شاہ
السلام علیکم ٹو آل ریڈرز اینڈ رائٹرز۔ ارے بھئی آپ سب لوگ ایک سادہ دل لڑکی سے متعارف ہونے کے لیے تیار ہیں (جی) چلیں پھر ٹھیک ہے تیار ہوجایئے۔ نام تو ہم آپ کو بتا ہی چکے ہیں باقی رہ گئی پیدائش تو میں 13 نومبر 1993ء کو اس دنیا میں وارد ہوئی اور اپنے مما‘ پاپا کی اتنی لاڈلی ہوں کہ حد نہیں ہے‘ چار بھائی اور ایک بہن ہے ۔پہلے تو میں اکلوتی تھی مگر بھلا ہو چھوٹی طوبیٰ ایمن کا جس نے سب سے آخر میں آکر میرے اکلوتے پن کو ختم کردیا اور اب مما پاپا کا لاڈ زیادہ وہ بٹورتی ہے ارے اس سے آپ یہ نہ سمجھیں کہ ہماری اہمیت ختم ہوگئی ہے نہیں ابھی ہماری اہمیت تو بھئی اول روز کی طرح برقرار ہے اور ان شاء اللہ رہے گی۔ چھ بہن بھائیوں میں میرا نمبر تیسرا ہے مجھ سے بڑے دو بھائی ہیں اور دو بھائی اور ایک بہن مجھ سے چھوٹی ہے۔ ایجوکیشن ہے میری میٹرک اس کے بعد عالمہ کے کورس کا دوسرا سال ہے‘ میرے پاپا کی خواہش تھی یہ سو اس خواہش پر عمل درآمد جاری ہے۔ آنچل از مائی فیورٹ ڈائجسٹ‘ آنٹی فرحت آراء کی جدائی ناقابل برداشت ہے لیکن ان شاء اللہ وہ ہمارے دلوں میں ہمیشہ زندہ رہیں گی ۔ بہاولپور سے آگے یزمان ہے جہاں میں رہتی ہوں اور مجھے اپنے شہر سے بہت پیار ہے‘ چلیں بھئی بات ہوجائے کچھ پسند ناپسند کی تو جناب کھانے میں مجھے مسور کی دال اور چاول اور چائنیز رائس بھی بہت پسند ہیں اس کے علاوہ بھنڈی ازمائی فیورٹ ڈش۔ ڈریسز مجھے رواج کے مطابق اچھے لگتے ہیں لیکن اس میں بھی سادگی ہونی چاہیے نہ کہ بے حیائی ویسے مما مجھے ساڑھی پہننے نہیں دیتیں چلیں کوئی بات نہیں۔ شادی زندہ باد شادی کے بعد پہن لیں گے ان شاء اللہ۔ کلرز میں مجھے ریڈ‘ پنک اور فیروزی بہت بہت پسند ہیں‘ میرے زیادہ تر ڈریسز ریڈ کلر میں اور فیروزی کلر میں ہیں۔ فرینڈز مجھے وہ اٹریکٹ کرتے ہیں جو صاف دل ہوں‘ سادہ ہوں۔ میری بیسٹ فرینڈز میں حنا آپی‘ زینب اور مہوش شامل ہیں اور مجھے نازی آپی کا ناول ’’اے محبت تیری خاطر‘‘ اور ’’پتھروں کی پلکوں پر‘‘ پڑھ کر ان سے عشق ہوگیا ہے (آہم) دوستی والا عشق غلط نہ سمجھ لیجیے گا۔ آنچل کی تمام ریڈرز مجھے اپنی اپنی لگتی ہیں اور میں ان سب سے فرینڈ شپ کرنا چاہوں گی کیوں بھئی؟ آپ لوگوں کو اگر اچھا لگے تو میری طرف ہاتھ ضرور بڑھایئے گا ہم دل و جان سے تھامیں گے۔ اریبہ شاہ فرام بہاولپور کیا آپ بھی مجھ سے فرینڈ شپ کریں گی؟ جواب دیجیے گا ضرور میں انتظار کروں گی‘ ان شاء اللہ۔ خوبی اور خامی کے بارے میں تو دوسرے ہی بتاسکتے ہیں ویسے خامی یہ ہے کہ غصہ بہت آتا ہے حد سے زیادہ آتا ہے میرے غصے سے سب گھر والے تنگ ہیں۔ عاطف اسلم اینڈ راحت فتح علی خان ازمائی فیورت سنگر۔ ان کے سونگز مجھے بہت پسند ہیں‘ نماز پڑھنا اور قرآن پاک کی تلاوت کرنا مجھے بہت اچھا لگتا ہے آپ سب سے میری ریکوئسٹ ہے کہ نماز کی پابندی کیا کریں اور بلاناغہ قرآن پاک کی تلاوت بھی کیا کریں۔ قیامت کے دن یہی ان شاء اللہ ہمارا ساتھ دیں گے‘ احمد فراز‘ وصی شاہ اور محسن نقوی کی شاعری بہت پسند ہے۔ جناب عالی اگر بور نہیں ہورہے تو پلیز تھوڑی دیر اور برداشت کرلیجیے‘ ڈائجسٹ سے تومجھے اتنا پیار ہے کہ بھائی چڑ جاتے ہیں جب آنچل آتا ہے تو بھائی کہتے ہیں ’’بس اب بے بی کو بھول جائو جب تک وہ آنچل ختم نہ کرلے‘‘ دراصل بے بی از مائی نکم نیم۔ چلیں جی ہم فضول لوگوں کو برداشت کرنے کا شکریہ‘ اوکے بھئی آپ سب کو اللہ تعالیٰ خوش رکھے‘اجازت دیجیے اللہ حافظ۔

Show More

Check Also

Close
Back to top button
error: Content is protected !!
×
Close