Hijaab Feb-17

ذکر اس پری وش کا

زینب احمد

مسکان
السلام علیکم حجاب کے تمام قارئین کو اور اسٹاف کو مجھ نا چیز کا محبتوں الفتوں چاہتوں اور شدتوں بھرا سلام قبول ہو، جی تو نام ہے میرا مسکان 28 اگست کو آنکھ کھولی ہم پانچ بہن بھائی ہیں سب سے بڑا بھائی سہیل اس کے بعد مس مسکان پھر وقاص وقار شعبان بھائی سہیل شادی شدہ ہیں ان کی چار بیٹیاں جویریہ، اریبہ، لائبہ، عروج۔ عروج میں جان اریبہ دل لائبہ جگر اور جویریہ معدہ (جو کہ ہر وقت خراب ہی رہتا ہے) میرے ابو بہت اچھے ہیں بس اتنا کہنا چاہوں گی آئی لو یو ابو جی، جی تو میں نہم کلاس کی طالبہ ہوں پڑھائی میں بس نارمل ہوں ماں جیسی نعمت نہیں ہے سچ کسی نے کہا ہے کسی بد نصیب کو دیکھنا ہو تو اس کو دیکھ لو جس کی ماں نہیں ہے اس لیے ہم بد نصیب ہیں امی کو فوت ہوئے نو سال ہوگئے ہیں سات سال ماں کا پیار دیکھا باقی ساری زندگی ترستے گزارتی ہے جو خدا کو منظور ہم کیا کہہ سکتے ہیں خوبیاں یہ ہے نفرت نہیں کرتی کسی سے‘ کسی کے لیے دل میں حسد نہیں رکھتی دل میں کھوٹ ہو اور منہ سے تعریف کرو ایسا ممکن نہیں جس کے ساتھ جیسی ہوں ویسے ہی ملتی ہوں خامیاں غصہ بہت آتا ہے گھر کے برتن اس بات کے گواہ ہیں اعتبار بہت جلد کرلیتی ہوں اس لیے دھوکہ مقدر بنتا ہے پسند نا پسند کی بات ہوجائے اب‘ کھانوں میں بریانی، اروی کا سالن، گوشت صرف مرغی کا پسند، آلو مٹر گوبھی سب پسند ہیں اور کریلے، کدو، پالک نہیں پسند، لباس میں شلوار قمیص، ساڑھی، فراک پسند ہے ساڑھی کبھی نہیں پہنی جیولری میں صرف ٹاپس، چوڑیاں پسند ہیں چپل صرف سادہ سی ہو، بڑی ہیل والی نہیں پسند۔ ذرا اپنا حلیہ بتا دوں گول سا منہ بڑی بڑی آنکھیں نارمل سا ناک ہاہاہا پیارے سے ہونٹ تھوڑی پر تل قد پانچ فٹ چار انچ رنگ صاف مطلب فل والا سفید نہیں نہ گندمی ہے لمبے لمبے ہاتھ جو کہ کلاس فیلو کو پسند ہیں بہت بہت جی تو اب پہچان لو گی ناں سب مجھے رنگوں میں سفید اور کالا سرخ پسند ہے آنچل بہت اچھا رسالہ ہے نازیہ کنول نازی آنچل کی جان ہیں وہ عشق جو ہم سے روٹھ گیا یہ چاہتیں یہ شدتیں، پتھروں کی پلکوں پر قراقرم کا تاج محل آتش عشق اور عشق آتش بہت بہت پسند ہے پسندیدہ کتاب قرآن مجید ہے خدا سب کو نمازی اور تلاوت کرنے کی توفیق دے، آمین۔ دوستیں بہت سی ہیں مگر بیسٹ دوست کوئی نہیں وہ اب آپ سب میں سے بنانی ہیں چن کے گی پریوں حجاب کے بغیر زندگی ادھوری ہے حجاب جن کے بغیر ادھورا ہے ان کے نام نازیہ کنول نازی، بشریٰ، مائرہ ملک، عروسہ شہوار، رملہ امل، عطروبہ، شگفتہ خان، صائمہ قریشی، انعم خان، سباس گل، کرن وفا، صنم ناز اور بھی بہت سی وہ پھر کبھی ان کے نام پسندیدہ فلم دھڑکن پسندیدہ گانا او صنم او صنم کاش ہوتا‘ اگر بس اس بات کے ساتھ اجازت ۔ اگر تم دنیا کی مفلسی سے تنگ آجائو اور رزق کا کوئی راستہ نہ نکلے تو صدقہ دے کر اللہ سے تجارت کرلو بتانا ضرور کیسا لگا، تعارف۔
فرح ناز
حجاب کے تمام ریڈرز اور رائٹرز کو میرا پیار بھرا سلام، میرا نام فرح ناز ہے میں رسال پور میں 21 مارچ 1998ء کو پیدا ہوئی لیکن اب سرگودھا کے گائوں مٹیلہ میں رہتی ہوں، ہم نو بہن بھائی ہیں میرا نمبر ساتواں ہے مجھے اپنی امی سے بہت پیار ہے آج ہم سب بہن بھائی جس مقام پر ہیں صرف اپنی امی کی وجہ سے ہیں مجھے فخر ہے خود پر کہ میں ان کی بیٹی ہوں، اللہ تعالیٰ میری امی کو دائمی صحت اور لمبی عمر عطا فرمائے اور بیت اللہ کا حج نصیب فرمائے آمین تھرڈ ایئر کی طالبہ ہوں تعلیمی میدان میں الحمدللہ اچھی کارکردگی دکھائی ہے میری پسندیدہ شخصیت حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم اور قائد اعظم رحمتہ اللہ ہیں بات آجاتی ہے پسند نا پسند کی مجھے سبزیاں کچھ خاص پسند نہیں، دالیں پسند ہیں سوائے ماش کی دال کے، پھلوں میں آم، انگور اور کیلا پسند ہے پسندیدہ ڈش بریانی ہے۔ میٹھے میں کھیر اور کسٹرڈ پسند ہے موسم خزاں کا پسند ہے خزاں رسیدہ درخت اچھے لگتے ہیں، بارش پسند ہے وہ بھی سردیوں کی چاندنی راتیں اٹریکٹ کرتی ہیں کلر بلیک اینڈ اونلی بلیک از موسٹ فیورٹ، لباس میں فراک چوڑی دار پاجامہ اور شلوار قمیص پسند ہے مجھے پاکستان اور پاک آرمی سے جنون کی حد تک عشق ہے میرا فیوٹ کرکٹر احمد شہزادہے فیورٹ سنگر راحت فتح علی خان ہے شاعری سے لگائو ہے میرے پسندیدہ شاعر علامہ محمد اقبال، محسن نقوی اور احمد فراز ہیں۔ پسندیدہ رائٹرز میں نازیہ کنول نازی، سمیرا شریف طور، نگہت عبداللہ اور راحت وفا شامل ہیںبات آجاتی ہے خوبیوں اور خامیوں کی خامیاں بے شمار ہیں اور خوبیاں برائے نام میری سب سے بڑی خامی یہ ہے کہ میں نماز کی پابند نہیں ہوں دعا کیجیے گا کہ میں پانچوں وقت کی نماز پڑھنے لگوں اور سنت نبوی ﷺ پر عمل کروں میں حساس بہت ہوں چھوٹی چھوٹی باتوں پر رونا آجاتا ہے میں ہر فن مولا ہوں سوائے گھر کے کاموں کے یعنی ہانڈی روٹی کے آپ بھی سوچ رہے ہوں گے پھر آتا کیا ہے مجھے خود غرض لوگوں اور مطلبی لوگوں سے سخت نفرت ہے خواہ وہ کوئی بھی ہو اسی لیے میرا حلقہ دوست زیادہ وسیع نہیں گنتی کے صرف چند دوست ہیں میرے سب سے مخلص دوست چاند اور ستارے ہیں نہیں سمجھ میں آیا ارے جو آسمان پر رات کو چمکتے ہیں میں ان ستاروں کی بات کر رہی ہوں یہ لوگوں کی طرح خود غرض نہیں ہیں اس لیے یہ میرے بہت پیارے دوست ہیں میں ان سے باتیں بھی کرتی ہوں میری خواہشات بہت عجیب ہیں میرا دل چاہتا ہے ایسی جگہ ہو جہاں میں چلی جائوں وہاں صرف سکون ہو، میرے ارد گرد کوئی نہ ہو (کیوں ہوں نا پاگل) میں جب آسمان پر پرندوں کو اڑتے دیکھتی ہوں تو میرا دل چاہتا ہے میں بھی ان کے سنگ اڑنے لگوں میرا رشتوں پر کوئی اعتبار نہیں کیونکہ ہر رشتے سے دھوکا کھایا ہے زندگی میں بہت سے دکھوں کا سامنا کیا ہے اور ہر رشتے سے سبق سیکھا ہے کبھی کبھی ایسا لگتا ہے جیسے دل میں کوئی آرزو اور تمنا نہیں اور نہ زندگی کی طلب بالکل اسی طرح
سانسوں کے سلسلے کو نہ دو زندگی کا نام
جینے کے باوجود بھی کچھ لوگ مر گئے
زیادہ تنگ کرنے کا ارادہ ترک کرتے ہوئے میں تشریف کی ٹوکری لے جا رہی ہوں دعا کیجیے گا میرے لیے اور میرے بہن بھائیوں کے لیے جو وہ چاہیں انہیں زندگی میں ملے اور وہ ہمیشہ خوش رہیں پاکستان اور پاک آرمی کے لیے دعا کیجیے گا اگر تعارف پسند آئے تو ضرور بتائیے گا، اللہ حافظ۔
زارا فریاد
السلام علیکم! تمام قارئین رائٹرز اینڈ آل حجاب اسٹاف، ہمارا نام تو یعنی پیارا سا نام زارا آپ جان ہی چکے ہیں اس دنیا میں 27 دسمبر 1997ء کو تشریف لا کر جو کمی رہ گئی تھی وہ پوری کردی ہمارے والدین کی زندگی میں جو اندھیرے تھے وہ پورے کے پورے دور کردیے اور نک نیم مشہور ہوگیا ’’زیری‘‘ پوری فیملی میں تو زارا کا کسی کو کچھ پتا ہی نہیں (بقول خاندان کے زیری) میری ایک پیاری سی شہزادی سی کزن بل بتوڑی شزارہ میرے ساتھ ہی اس دنیا میں آئی تھی تو جناب آئیں اپنی طرف تو ہم تین بہن بھائی ہیں بڑی میں ہوں پھر بہن پھر بھائی میں بی کام کر رہی ہوں میرا تعلق کوٹ جیمل سے ہے جو آزاد کشمیر کا گائوں ہے خوبیوں اور خامیوں پر آئیں تو ابھی سوچا بھی نہیں خوبیاں ختم اور خامیوں کا نہ ختم ہونے والا سلسلہ شروع بقول میری کیوٹ سی فرینڈ عائشہ کے غصے کی بہت تیز ہوں میری اور میری کزن کی مشترکہ عادت ناخن چبانا بہت دفعہ مار کھا چکی ہوں (اپنی نانی اماں سے)
پسند کی بات کی جائے تو پسندیدہ شخصیات میں امام حسین رضی اللہ تعالیٰ عنہ ہیں پسندیدہ رنگ بلیک سی گرین اور ریڈ ہیں جیولری میں بریسلیٹ پسند ہے موسموں میں موسم خزاں بہت پسند ہے مہندی لگانا بہت پسند ہے کپڑوں میں فراک اور قمیص، ٹرائوزر بہت پسند ہیں میک اپ میں لپ اسٹک پسند ہے ڈائجسٹوں اور ناولوں کی شیدائی ہوں کوئی بھی ناول لائوں تو مجھ سے پہلے شزارہ پڑھنا اپنا فرض سمجھتی ہے پسندید مصنفین میں نازیہ کنول، شازیہ مصطفیٰ، سمیرا شریف، اقرا صغیر ہیں اور ناول بھی ان ہی کے پسند ہیں اب آئیں دوستوں کی طرف تو سر فہرست عائشہ گل (پیاری اور بیسٹ فرینڈ) صوفیہ، سنبل، رئیسہ، نوشابہ، سدرہ، روشان، زینب، یمنیٰ، سعدیہ ہیں اور عطیہ، عاصمہ، سعدیہ، شازیہ، آسیہ سے جو کہ ماسیاں (خالہ) ہیں بہت پیار ہے میں اپنی جان تک ان سے پیار کرتی ہوں دنیا کی بیسٹ ماسیاں ہیں میری اور میری نو پھوپیاں ہیں سب بہت اچھی ہیں مجھے ان سے بھی بہت زیادہ پیار ہے آئی لو یو آل پھپیو اور خالائوں۔ پسندیدہ ٹیچرز میں (میڈم طاہرہ، سر نوید، سر شہباز، سر عظیم، سر مستنصر سر فیضان، میڈم سجیلا، میڈم شازیہ، میڈم صائمہ ہیں سب شادی شدہ بال بچوں والے ہیں)
اب میں اپنے پسندیدہ بندے کی بات کروں تو وہ میری نانی اماں ہیں اور والد صاحب آئی لو یو نانی اماں جس چیز کی ضرورت ہو وہ لادیتی ہیں مجھے ٹیبلٹ کا بہت شوق تھا وہ والد صاحب نے بھیج دیا ہر شوق اللہ کا شکر ہے پورا ہوجاتا ہے اب آپ سوچ رہی ہوں گی کہ یہ تو پھیلتی ہی جا رہی ہے پتا نہیں کب بس کرے گی آپ سے التماس ہے کہ اس کو ردی کی ٹوکری میں نہ پھینک دینا اس کو حجاب کے صفحوں پر لٹکا دینا امید اکٹھی کر کے ڈر ڈر کے یہ سب کچھ لکھا ہے کہ پتا نہیں شائع کریں گے بھی یا نہیں امید پر دنیا قائم ہے۔ اسے میری اور میری کزن کی سالگرہ کا تحفہ سمجھ کر شائع کردیں۔ یہ ہمارے لیے بہت بڑا اعزاز ہوگا اور آپ کی طرف سے کبھی بھی نہ بھولنے والا تحفہ ہوگا اب میں آپ سے اجازت چاہتی ہوں حالانکہ بس کرنے کا دل ہی نہیں کر رہا لیکن جانے والوں کو کون روک سکتا ہے اس امید پر اجازت چاہتی ہوں کہ اگر یہ شائع ہوگیا تو پھر سے حاضر ہوجائوں گی، (رب راکھا)
عمارہ عباس
السلام علیکم و رحمتہ اللہ و برکاتہ۔ حجاب اسٹاف اور پیاری بہنو، آپ سب کو ڈھیروں دعائیں اور محبت بھرا سلام قبول ہو، میرا نام عمارہ عباس ہے یکم مئی کو جلوہ افروز ہو کر شور کوٹ شہر ضلع جھنگ کو رونق بخشی یہ شہر اپنے در بار مائی باپ کی وجہ سے شہرت یافتہ شہر ہے ہماری کاسٹ راجپوت ہے ہم ما شاء اللہ آٹھ بھائی اور تین بہنیں ہیں میرا نمبر آخری ہے تین بھائی اور دو بہنیں شادی شدہ ہیں انٹر میڈیٹ کے بعد تعلیمی سلسلہ چند وجوہات کی بنا پر جاری نہ رکھ سکی جس کا بے حد افسوس ہے غصے کی تیز ہوں لیکن بہت جلد نارمل ہوجاتی ہوں کوشش کرتی ہوں کہ میری ذات کسی کے لیے تکلیف کا باعث نہ بنے میری سب سے بڑی خامی صبح دیر سے اٹھنا ہے گھر والے کہتے ہیں عمارہ تم بہت ضدی ہو، فرینڈز بنانے کے معاملے میں بالکل صفر ہوں ایک دوست عائشہ ہے جو کہ شادی کے بعد سسرال کو پیاری ہوچکی ہے۔ میری پسندیدہ رائٹرز سمیرا شریف طور، نازیہ کنول نازی، رخسانہ نگار عدنان اور عنیزہ سید ہیں میرے فیورٹ ناول پیر کامل ﷺ جنت کے پتے، ماہی ماہی کوک دی میں، جو چلے تو جاں سے گزر گئے اور زندگی ایک روشنی ہیں‘ خوشبوئوں میں مجھے مٹی اور موتیا کی خوش بو پسند ہے پھولوں میں مجھے ریڈ روز اچھا لگتا ہے (سرخ گلاب) پسندیدہ رنگ وائٹ،بلیک، پنک اور گرے ہیں قدرتی مناظر سے مجھے عشق ہے موسموں میں مجھے سردیاں اچھی لگتی ہیں (شمالی علاقہ جات میں رہتی تو شاید گرمیاں بھی اچھی لگنے لگتیں لیکن اب گرمیاں مجھے جبین سسٹرز کے ناول میں صرف پڑھنے کی حد تک اچھی لگتی ہیں) لباس میں لانگ شرٹ ٹرائوزر، کلیوں والا گھیردار فراک اور چوڑی دار پاجامہ پسند ہے میک اپ اور جیولری کا شوق بالکل بھی نہیں ہے کھانے میں چاول، بھنڈی گوشت، پالک گوشت اور سموسے بہت پسند ہیں ویسے جو ملے صبر شکر سے کھا لیتی ہوں نخرہ بالکل بھی نہیں کرتی پسندیدہ شاعر احمد فراز، وصی شاہ، پروین شاکر، علامہ اقبال اور فیض احمد فیض ہیں ڈائری لکھنا اچھا لگتا ہے جب بھی ٹائم ملے اور کچھ اچھا لگے تو ضرور ڈائری میں نوٹ کرتی ہیں۔
مزے کی بات بتائوں مجھے دوسروں کی ڈائریاں پڑھنے کا بہت شوق ہے بارش اچھی لگتی ہے لیکن سردیوں کی بارش ہو چائے کا مگ بمع گرما گرم پکوڑے اور میری موسٹ فیورٹ رائٹر نمرہ احمد کا ناول ہو تو کیا ہی بات ہے کیوں آپ کا بھی دل مچلنے لگا نا،سیدہ جیا کاظمی، اریبہ شاہ، شاہ زندگی، جاناں، ام ثمامہ، عطروبہ سکندر، نوشین اقبال نوشی، طیبہ نذیر، صدف سلیمان، پروین افضل شاہین، کرن وفا اور امبر گل آپ سب کو میرا خلوص بھرا سلام اپنا خیال اور دعائوں میں یاد رکھا کریں کوشش کریں کہ آپ کی وجہ سے کبھی کسی کی آنکھ میں آنسو نہ آئیں، اس سے پہلے کہ آپ بور ہوں اجازت چاہوں گی۔ اﷲ نگہبان۔

Show More

Check Also

Close
Back to top button
error: Content is protected !!
×
Close