Aanchal Nov-16

بیاض دل

میمونہ رومان

سباس گل… رحیم یار خان

ہم بھی دیکھیں کہ کب پکارو گے؟
ہم بھی آواز اب نہیں دیں گے

حمیرا قریشی… حیدر آباد سندھ

درد جب سینے میں کروٹیں بدلتا ہے
قلم میرا بدکتا ہے درد تحریر کرتاہے

حمیرا نوشین… منڈی بہائو الدین

شب فراق مجھے آج یوں ڈراتی ہے
تیرے بغیر میری پہلی رات ہو جیسے
اس کی یادکی یہ بھی تو اک کرامت ہے
ہزار میل پہ ہوکر بھی ساتھ ہو جیسے

تمنا بلوچ… ڈی آئی خان

مجھ کو پتا ہی نہ چلا تمنا
کہ کب وہ میری تمنا بن گیا

کبریٰ مہتاب… بوسال سکھا

تاعمر کون کرتا ہے چاہت میرے حضور
ملتے ہیں کب جہاں میں زلیخا مزاج لوگ

شبنم کنول… حافظ آباد

دل تجھ سے آشنا ہے شناسا تو نہیں ہے
یہ میری زندگی ہے یار افسانہ تو نہیں ہے
تو میرے ماضی کی بھولی بسری کہانی ہو جیسے
پھر بھی میرا ماضی اتنا پرانا تو نہیںہے

سامعہ ملک پرویز… خانپور‘ ہزارہ

موج عشق کی وہ تلاطم خیز روانی
جیسے اجڑا ہوا دریا بکھرا ہوا پانی
تیری آنکھوں کی سرخی کا بیان
تیری شب بھر کی اداسی کی کہانی

ثناء رسول ہاشمی… صادق آباد

ہم ہیں ظلمت میں کہ ابھرا نہیںخورشید اب کے
کوئی کرتا ہی نہیں رات کی تردید اب کے
کون سنتا تھا حدیث غم دل یوں تو مگر
ہم نے چھیڑی ہے تیرے نام کی تمہید اب کے

فوزیہ سلطانہ… تونسہ شریف

وقت پر کافی ہے اک قطرہ بھی آبِ خشک ہنگام کا
جل گیا جب کھیت برسا مینہ تو پھر کس کام کا

ارم کمال… فیصل آباد

یہاں ہر طرف ہے عجب سماں سب ہی خودپسند سب ہی خود نما
دل بے سکون کو نہ مل سکا کوئی چارہ گر بڑی دیر تک
مجھے زندگی ہے عزیز تر اسی واسطے میرے ہمسفر
مجھے قطرہ قطرہ پلا زہر‘ جو کرے اثر بڑی دیر تک

کرن شبیر… کراچی

ہر بار یہ سوچ کر دل بھر آیا
اتنی عمر میں کیا کھویا کیا پایا

پارس شاہ… چکوال

احساس کے میخانے میں کہا ں‘ اب فکر و نظر کی قندیلیں
آلام کی شدت کیا کہیے‘ کچھ یاد رہی کچھ بھول گئے
اب اپنی حقیقت بھی محسن‘ بے ربط کہانی لگتی ہے
دنیا کی حقیقت کیا کہیے‘ کچھ یاد رہی کچھ بھول گئے

عائشہ پرویز… کراچی

نومبر ہو‘ دسمبر ہو یا صحرا میں سمندر ہو
میرے دل میں ہمیشہ سے خزاں کی راج دھانی ہے

نجم انجم… کراچی

ہلکی ہلکی سی سرد ہوا اور ذرا سا درد دل
انداز اچھا ہے اے دسمبر تیرے آنے کا

ایس گوہر طور… تاندلیانوالہ فیصل آباد

میں نکلا تھا گھر سے سکون کی تلاش میں
دیکھا تو جنگلوں میں تھے میلے لگے ہوئے

نجمہ خان…مانسہرہ

جب مکان کچے تھے تو دل بھی پکے تھے
جب مکان پکے ہوئے تو دل کچے ہوگئے

مشا علی مسکان… قمر مشانی

دنیا نے تیری یاد سے بیگانہ کردیا
تجھ سے بھی دلفریب ہیں غم روزگار کے

عنزہ یونس آباد… حافظ آباد

اک دل کا درد تھا کہ رہا زندگی کے ساتھ
اک دل کا چین تھا کہ صدا ڈھونڈتے رہے

رانی کوثر رانی… ہری پور

جب بھی مشکل پڑی تو میں نے صبر کیا رانیؔ
شاید اسی کے وسیلے سے میرے رب نے مجھ پر کرم کیا

ادیبہ ارشد … ملتان

فکر تو تیری آج بھی کرتے ہیں
بس ذکر کرنے کا حق اب نہیں رہا

عائش کشمالے… رحیم یار خان

خطائیں دیکھتا بھی ہے‘ عطائیں کم نہیں کرتا
سمجھ میں یہ نہیں آتا وہ اتنا مہرباں کیوں ہے

مدیحہ کنول سرور… چشتیاں

اور کیاثبوت دوں میں تجھے اپنی محبت کا کنولؔ
تُو کیا ہے میری زندگی میں ذرا میری شاعری میں دیکھ

کوثر خالد جڑانوالہ…فیصل آباد

حقیر سمجھ کر جن کو بجھادیا تُو نے
یہی چراغ جلیں گے تو روشنی ہوگی

نورین انجم… کراچی

دلوں میں خدا کا ہونا لازم ہے اقبالؔ
سجدوں میں پڑے رہنے سے جنت نہیں ملتی

صائمہ ذوالفقار… چکمنبر

اک محبوب بے پروا‘ اک محبت بے پناہ
دونوں کافی ہیں سکون برباد کرنے کے لیے

شمع مسکان… جام پور

چشم میں سمندر اتر آیا ہے
کوئی خوشی کی جوت جگائوں کیسے
ہجر نے تیرے مار ڈالا مسکان
میں تم بن عید منائوں کیسے

پروین افضل شاہین… بہاولنگر

موسموں کا تشددتو جاری رہا زندگی تھک گئی
سرد راتیں بدن پہ جھولتا چھیتڑا زندگی تھک گئی
آنکھوں میں اُگے وحشتوں میں گھرے جسم و جان دیکھ کر
رات چاند اور ستاروں نے بھی کہہ دیا زندگی تھک گئی

ایم فاطمہ سیال… محمود پور

شب تنہائی میں وہ اک خواب سہانا تھا
دیکھنے کو تجھے نیند کا بہانہ تھا
ستاروں نے جو پوچھا موندی پلکوں کا سبب ایمؔ
دل چیخ اٹھا‘ ابھی اس نے خواب میں آنا تھا

ملک غزالہ عالم… کلور کوٹ

محبت ناز ہے‘ یہ ناز کب ہر دل سے اٹھتا ہے
یہ وہ سنگ گراں ہے جو بڑی مشکل سے اٹھتا ہے
لگن میں عشق کی‘ شعلہ کوئی مشکل سے اٹھتا ہے
جلن رہتی ہے آنکھوں میں دھواں سا دل سے اٹھتا ہے

جویریہ وسمی… ڈونگہ بونگہ

پلکوں کی حد کو توڑ کر دامن پر آگرا
اک آنسو میرے صبر کی توہین کرگیا

قرۃ العین حسن… ڈیرہ غازی خان

شمع پر چلا مقدمہ پروانے کے خون کا
شمع سے پوچھا کیا قصور اس معصوم کا
شمع بولی یہ میرے آگے پیچھے گھوم رہا تھا
بھری محفل میں مجھے چوم رہا تھا

Show More

Check Also

Close
Back to top button
error: Content is protected !!
×
Close