Hijaab Dec-16

بات چیت

مدیرہ

عمر عزیز سے ایک سال اور نکل گیا۔ سال نے پیچھے مڑ کر دیکھا تو بجز و خوف و نا امیدی‘ وحشت‘ دہشت کے سوا کچھ نہ تھا۔ آنے والا سال بھی روشن نظر نہیں آرہا۔ نہ خوف دور ہونے کی امید ہے اور نہ وحشت و دہشت ختم ہونے کی۔ ہمیں اپنی نہیں اُن مظلوموں کی فکر ہے جو طرح طرح کے ایوانوں میں خوف کی زندگی گزار رہے ہیں۔ ہزار قسم کی حفاظتوں کے باوجود‘ ایوانوں سے باہر آتے ڈرتے ہیں۔ ’’چوہے بھاگ‘ بلی آئی‘‘ کا ڈرامہ ہر جانب نظر آرہا ہے۔ بے چارگی سی بے چارگی ہے۔ نہ نیند اپنی‘ نہ کھانا پینا اپنا‘ نہ آزادی سے گھومنا پھرنا‘ نہ آزادی کی سانس لینا۔ کیا ہوگا بے چاروں کا؟ چھوڑئیے ’’اپنی کرنی‘ اپنی بھرنی۔‘‘
بس اللہ سبحان و تعالیٰ سے ہر وقت دعا مانگتی رہیئے کہ ’’رب العزت‘‘ رسوائیوں سے بچائے‘ اس دنیا میں بھی اور اُس دنیا میں بھی۔ تمام واقعات سے یہ آگاہی ہوئی کہ ’’دولت‘‘ ایمان کو کھاجاتی ہے۔ عقل کو خبط کردیتی ہے‘ اور صحت برباد کردیتی ہے۔ کئی دنوں سے جس دولت کے اعداد و شمار کا چرچا ہے‘ حیران ہیں اتنے درختوں میں پتے بھی نہیں جتنے ’’نوٹ‘‘ لوگوں کے پاس ہیں جو اپنی جیب میں نہیں‘ اغیار کی گود میں رکھے ہوئے ہیں۔ نادانوں کو اتنا بھی شعور نہیں کہ جس طرح درختوں سے سوکھے پتے جھڑ جاتے ہیں اسی طرح ’’نوٹ‘‘ بھی جھولی سے جھڑ جائیں گے اور ’’نادان‘‘ بے پتوں کے درخت کی طرح کھڑے رہ جائیں گے۔

ہا ں محبت ہے
محبت کا حسین اقرار نازیہ جمال کے دلکش انداز میں۔
ندامت سے پہلے
نوخیز کلیوں کے لیے بہترین پیغام کا حامل، فرحین اظفر کا موثر افسانہ۔
منڈا صدقے میرے تے
ہلکے پھلکے انداز میں لکھا سحرش فاطمہ کا طربیہ افسانہ۔
الوداع دسمبر
دسمبر کے یخ بستہ لمحات کو الوداع کہتی قرۃ العین سکندر شریک محفل ہیں۔
مجھے مصروف رہنے دو
ام مریم ایک طویل عرصے کے بعد اپنے ناولٹ کے سنگ جلوہ گر ہیں۔
بھیگتے دسمبر
محبت کی برکھا رت میں بھیگتے دلوں کی کہانی، حیا بخاری کے دلکش انداز میں۔
دسمبر بیت نہ جائے
دسمبر دکھوں کا استعارہ ہے یا خوشیوں کا، جانیے راشدہ علی کے مختصر افسانے میں۔
کتنے معتبر ٹھہرے
چاہت کے جذبات کو پزیرائی بخشتی نادیہ احمد ایک دلفریب پیرائے میں مکمل ناول کے سنگ جلوہ گر ہیں۔
افراتفری
افراتفری کے عالم میں یک گو نہ سکون تلاش کرنے والوں کی کہانی، تمثیلہ زاہد کی زبانی۔
بنت حوا
حمیرا شاہین ایک موثر پیغام کے ساتھ پہلی بار شریک محفل ہیں۔
بھولا
سیدہ فرحین جعفری کے قلم سے آراستہ منفرد و دلکش کاوش ۔
میری دعائوں کا حاصل
افشاں شاہد مختصر افسانے کے سنگ جلوہ گر ہیں۔
دسمبر اور نہیں
دسمبر سے وابستہ حسین یادوں کا احوال حرا قریشی کے شگفتہ و دلکش انداز میں۔
الیکٹرانک محبت
نسل نو کے لیے موثر پیغام کی حاصل ام حبیبہ کی موثر کاوش۔
خوابوں کی راہ گزر پر
حسین خوابوں کی تعبیر کیسے ملی جانیے ارم فاطمہ کے مختصر افسانے میں۔
ماں
ماں کی ممتا کے جذبات کو لفظوں میں سموتی فاطمہ نور ایک خوب صورت کاوش کے سنگ حاضر ہیں۔

Show More

Check Also

Close
Back to top button
error: Content is protected !!
×
Close