Aanchal May 15

بیاض دل

میمونہ رومان

طیبہ سعدیہ… سیالکوٹ

میں اور میرا ربّ روز بھول جاتے ہیں اقبالؔ
میں اس کی عطائوں کو وہ میری خطائوں کو

نادیہ عباس دیا قریشی… موسیٰ خیل

ماں تیرے بعد کون لبوں سے اپنے
وقت رخصت میرے ماتھے پہ دعا لکھے گا

علمٰہ شمشاد حسین… کورنگی‘ کراچی

عنوان زندگی پر بس اتنا ہی لکھ پائی ہوں
بہت کمزور رشتے تھے بہت مضبوط لوگوں سے

پروین افضل شاہین… بہاولنگر

تصویر شاہکار تھی لاکھوں میں بک گئی
جس میں بغیر روٹی کے بچہ اداس تھا

فصیحہ آصف خان… ملتان

کوئی جو دور بیٹھا ہے
جب ہی تو شام اداس ہے

حمیرا نوشین… منڈی بہائو الدین

میرے مولا نے مجھ کو چاہتوں کی سلطنت دے دی
مگر پہلی محبت کا خسارہ ساتھ رہتا ہے

فائزہ بھٹی… پتوکی

دیکھ کر کہیں اور تیرے پیار کی برسات
خشک سالی اتر آتی ہے دل کی زمین پر

ضیار احمد… پتوکی

ناصحا! مت کر نصیحت کیوں مجھے سمجھائے ہے
نیک و بد سوجھے نہیں جب دل کہیں لگ جائے ہیں

شزا بلوچ… جھنگ صدر

محبت زندگی بدل دیتی ہے صاحب
مل جائے تب بھی‘ نہ ملے تب بھی

سندس رفیق سندر… عبد الحکیم

ادا قاتل‘ بیاں قاتل‘ زباں قاتل‘ نگاہ قاتل
تمہارا سلسلہ شاید کسی قاتل سے ملتا ہے

فرزانہ ندیم شکوری… اسلام پورہ کمالیہ

اس نے میرے زخموں کا یوں کیا علاج
مرہم بھی گر لگایا تو کانٹوں کی نوک سے

پری طور… جہلم

چہرے کی ہنسی سے ہر غم مٹادو
بہت کم بولو پر سب کچھ بتادو
خود نہ روٹھو اور سب کو منالو
یہ راز ہے زندگی کا جیو اور جینا سکھادو

عائشہ پرویز صدیقی… کراچی

میں نے مانا کہ یہ تقدیر کا لکھا ہے اٹل
میرا ایمان دعائوں میں اثر ہوتا ہے
اس کو مانگوں گی خدا سے میں جنوں کی حد تک
عشق جب حد سے گزرتا ہے تو امر ہوتا ہے

ایس انمول… بھابڑہ شریف

میں نے مانا کہ تو یوسف سا حسیں ہے لیکن
یہ میرا دل ہے کوئی مصر کا بازار نہیں

نورین مسکان سرور… ڈسکہ

شہر امیر کی گندم ہوتی رہی خراب
بیٹی کسی غریب کی فاقوں سے مر گئی

تناوش فریال… کہروڑپکا

میں اگر چاہوں تو بھی شاید 
نہ لکھ سکوں ان لفظوں کو
جنہیں پڑھ کر تم سمجھ سکو
کہ کتنی محبت ہے تم سے 

رشک وفا… برنالی

وہ مجھ سے بچھڑ کر بدلا تو ضرور ہے مگر پھر بھی وفاؔ
دل کو یقین ہے کہ وہ اک بار تو رویا ہوگا مجھے یاد کرکے

نادیہ گل نادی… مخدوم پور

یاد کا زہر دل میں ہی پھیل گیا
دیر کردی ہم نے اسے بھول جانے میں

عائشہ علی… فیصل آباد

میری ذات صفر کی مانند ہے
تنہا جسے کوئی پسند نہیں کرتا
مگر کسی کے ساتھ لگ جائے
تو اس کی اوقات بدل دیتا ہے

دیا آفریں… شاہدرہ

بوند گری تو آنکھ میں آنسو بھی آگئے
بارش کا اس کی یاد سے رشتہ ضرور تھا

عائشہ نور عاشا… گجرات

بات ہے راستے پر جانے کی
اور جانے کا راستہ ہی نہیں

صائمہ سکندر سومرو… حیدرآباد‘ سندھ

قیامت تک رہے سجدے میں سر میرا اے خدا
کہ تیری نعمتوں کے شکر کے لیے یہ زندگی کافی نہیں

فاطمہ سعدیہ… گائوں کھدے

تراش کر تو پتھر کی بھی قیمت ہوہی جاتی ہے
اگر بھگوان بن جائے عقیدت ہو ہی جاتی ہے
کسی انجان لمحے میں کسی انجان چہرے سے
محبت کی نہیں جاتی محبت ہو ہی جاتی ہے

رخ کومل شہزادی… سرگودھا

میں اداس رستہ ہوں شام کا مجھے آہٹوں کی تلاش ہے
یہ ستارے سب ہیں بجھے بجھے‘ مجھے جگنوئوں کی تلاش ہے
وہ جو ایک دریا تھا آگ کا‘ بس راستوں سے گزر گیا
ہمیں کب سے ریت کا شہر میں نئی بارشوں کی تلاش ہے

سائرہ حبیب اوڈ… عبد الحکیم

مت کیا کر اتنے گناہ توبہ کی آس پر
بے اعتبار سی موت ہے نہ جانے کب آجائے

ارم کمال… فیصل آباد

ہونٹ مصروف دعا ہیں کہ اے میرے ربّ عظیم
آرزوئوں کو مہکتی ہوئی تعبیر ملے

عروسہ شہوار رفیع… کالا گوجراں جہلم

جو بندھن ضبط کے ہیں آج سارے ٹوٹ جائیں گے
ان آنکھوں کی سمندر کے کنارے ٹوٹ جائیں گے
بہت رویا کرے گا ہجر کی ویران راتوں میں
ہماری قربتوں کے جب سہارے ٹوٹ جائیں گے

ارویٰ مختار… میاں چنوں

وعدے وفا کے اور چاہت جسم کی
اگر یہ عشق ہے تو ہوس کس کو کہتے ہیں

عائشہ صدیقہ… چکوال

مزا برسات کا چاہو تو ان آنکھوں میں آبیٹھو
وہ برسوں میں کہیں برسیں یہ برسوں سے برستی ہیں

سیدہ جیا عباس… تلہ گنگ

احساس محبت سے کسی گوشۂ دل میں
جب چوٹ ابھر آئے تو لگتا ہے کہ تم ہو
سر رکھ کے جو پتھر پر کبھی راہِ الم میں
کچھ نیند سی آجائے تو لگتا ہے کہ تم ہو

حمیرا قریشی… حیدرآباد‘ سندھ

تیرے بخت کا ستارا میرے بخت سے روٹھا رہا
زیست یوں ہی گزر گئی میں تیرے غم میں ڈوبا رہا
ہر سنہری شب بیتی عالمِ اذیت میں
بعد تیرے اے ہمسفر میں خود سے بھی روٹھا رہا

کوثر ناز… حیدرآباد‘ سندھ

ایک ستم زمانے نے کیا چھین لی مجھ سے میری محبت
ایک ستم میں نے کیا کہ پھر سے محبت کرلی

ایس احمد… بہاولپور

آغازِ محبت ہے یہ ابھی پیدا وفا کرنی ہے
تم سے تو صنم محبت کی انتہا کرنی ہے
رہ نہ جائے کوئی تقاضا باقی رضاؔ
ادب سے ہر قدم کی ابتدا کرنی ہے

شگفتہ الطاف… جوہر آباد

یوں در پر دہ رقیبوں سے گلے شکوے نہیں اچھے
تمہیں جو بھی شکایت تھی ہمارے روبرو کرتے

طیبہ طاہرہ… تونسہ شریف

غیروں کی سختیوں کا ہم نے ذکر ہی کب کیا ہے
اپنوں کی شفقتوں کے ستائے ہوئے ہیں ہم

ثوبیہ… راولپنڈی

جیسے صحرا میں کوئی مانگتا ہے بارش کی دعا
ٹھیک ویسے ہی ربّ سے تمہیں مانگ رہے ہیں

سعیدہ ندا… ستیانہ

تجھ سے بچھڑے تو عجب ڈھنگ پہ چل نکلی زندگی
تجھ سے ملنے کے بھی اطوار تھے نرالے

عنبر مجید… کوٹ قیصرانی

جس رستے پر بھی دیکھی تاریکی انمول
اس رستے پر چل دیئے ہاتھ میں شمع لے کر

رائو کرن بدر… ہالا نواں

سر شام تیرے تمام لفظ‘ تیرے ہر لفظ کو سوچنا
یہی الفتوں کا اصول ہے یہی محبتوں کا جنون ہے

جازبہ عباسی… دیول‘ مری

وہ اکثر مجھ سے کہتا تھا کہ
تم نے کبھی غور سے اپنی
ان آنکھوں کو دیکھا ہے
سونے والوں کی طرح‘ جاگنے والوں جیسی

طاہرہ غزل… جتوئی

سبھی تعریف کرتے ہیں میری تحریر کی لیکن
کبھی کوئی نہیں سنتا میرے الفاظ کی سسکی

عنزہ یونس… حافظ آباد

تو یاد کر یا بھول جا
تو یاد ہے یہ یاد رکھ

اقصیٰ اشمل وفا… حویلیاں

مجھے خبر نہ ہوئی کیا تلاش تھی اس کی
جو میری ذات کے صفحے پلٹ گیا یونہی

دعا ہاشمی… فیصل آباد

دیکھئے پہنچے کہاں تک سوزشِ دل کا اثر
صر صر وحشت کا یہ شعلہ ہے بھڑکایا ہوا

سبط الرحمن… ماچھیوال گائوں

فطرت کا تقاضا ہے نہیں عشق تماشا
آدم کو رلا دیتی ہے حواّ کی جدائی

فیاض اسحاق مہیانہ… سلانوالی

فاصلے ایسے ہوجائیں گے کبھی سوچا نہ تھا
سامنے بیٹھے تھا میرے اور وہ میرا نہ تھا
آج اس نے اپنے دکھ بھی علیحدہ کرلیے
آج میں جو رویا تو میرے ساتھ وہ رویا بھی نہ تھا

ارم وڑائچ… شادیوال گجرات

کس قدر بے ساختہ پن چاہتی ہے زندگی
شاخ سے اڑتا پرندہ دیکھنا تو سوچنا

ام عمارہ… چیچہ وطنی

پیار کے دیپ جلانے والے کچھ کچھ پاگل ہوتے ہیں
اپنی جان سے جانے والے کچھ کچھ پاگل ہوتے ہیں
جان سے پیارے لوگوں سے کچھ کچھ پردہ لازم ہے
ساری بات بتانے والے کچھ کچھ پاگل ہوتے ہیں

رائو رفاقت علی… لودھراں

میرے عشق کا نشہ اس قدر طاری ہو ان پر
جب میں بچھڑوں تو ان پر سوگ مرض فرض ہوجائے

عائشہ سلیم … کراچی

کبھی کبھار اسے دیکھ لیں کہیں مل لیں
یہ کب کہا ہے کہ وہ خوش بدن ہمارا ہو
میں اپنے حصے کے سُکھ جس کے نام کرڈالوں
کوئی تو ہو جومجھے اس طرح سے پیارا ہو

جویریہ ضیاء…کراچی

ہمیں جان دینی ہے اک دن وہ کس طرح وہ کہیں سہی
ہمیں آپ کھینچے دَر پر جو نہیں کوئی تو ہم سہی
اسے دیکھنے کی جو لو لگی تو نصیرؔ دیکھ ہی لیں گے
وہ ہزار آنکھ سے دور ہوں وہ ہزار پردہ نشین سہی

Show More

Check Also

Close
Back to top button
error: Content is protected !!
×
Close