Aanchal Feb-07

درجواب آں

مدیرہ

فرح طاہر …حسین آگاہی
فرح ڈیئر‘ خوش رہو۔ ہمیں آپ آنی کہہ سکتی ہیں۔ ہمیں خوشی ہوگی۔ اللہ تعالیٰ آپ کو تمام امتحانوں میں کامیاب کرے(آمین)۔ دیکھ رہی ہو کہ ’’مسلسل نمبروں‘‘ میں مصروف ہیں۔ پڑھنے کی نوبت کہاں آسکتی ہے۔ ذرا فرصت ہونے دو۔ پڑھ ڈالیں گے اور انجام سے بھی باخبر کردیں گے۔ لازمی جواب حاضر ہے۔

فریدہ خانم … لاہور
فریدہ ڈیئر۔ خوش رہو۔ شمع اقبال کا انٹرویو ہنوز نہیں ملا۔ رجسٹرڈ ہونے کے باوجود عید کی چھٹیاں کھاگئیں۔ بھانجے کی مبارکباد۔ اللہ بچے کو عمر دراز عطا فرمائے اور ایمان سے نوازے (آمین) آپ کے لئے دعائیں ہی دعائیں۔ پروردگار آپ کی مشکلات کو دور کردے اور ایک مطمئن اور پرسکون زندگی عطا فرمائے(آمین)۔

نادیہ فاطمہ رضوی … کراچی
نادیہ‘ دعا۔ ناول جلد چھپ جائے گا۔ بے چینی دور کرلیجئے۔ آج کل اُن کا نمبر لگا ہوا ہے جو ہمارے پاس ایک ایک سال سے رکھے انتظار کررہے ہیں۔ ناول ہمارے پاس موجود ہے۔ بس ذرا ہم پرانے ساتھیوں کو چھاپنے میں لگے ہوئے ہیں جنہوں نے ’’صبر‘‘ کی انتہا کردی ہے۔

رخشندہ جاوید…لاہور
رخشندہ ڈیئر‘خوش رہو۔ آپ کی خوشی سے ہمیں بھی خوشی حاصل ہوئی۔ اللہ تعالیٰ آپ کے والدین کو ہنستا بستا رکھے اور اپنی اولاد کی خوشیاں دیکھنا نصیب کرے(آمین) نظم‘ غزل شعبے کو بھیج دیئے ہیں۔ اس کا وہیں انتخاب ہوتا ہے۔ اگر معیاری ہوئی تو چھپ جائے گی۔ ورنہ معذرت۔ بہتر تو یہ ہے کہ شاعری کے چکر میں نہ پڑو‘ خواہ مخواہ وقت برباد ہوتا ہے۔ ہانڈی چولہا سنبھالو۔

مس ارم نور … کراچی
ارم! دعا۔ ناراضگی نامہ موصول ہوا۔ چھپنے کے لئے معیاری ہونا ضروری ہے۔ شعبے والے جو معیاری سمجھتے ہیں اُسے منتخب کرلیتے ہیں۔ آپ کے ساتھ بھی غالباً یہی ہورہا ہوگا۔ خوشی ہوئی کہ آپ جلد ہی پیا دیس سدھارنے والی ہیں۔ وہاں جا کر آنچل کو اور ہمیں بھول نہ جائیے گا۔ لکھیں یا نہ لکھ سکیں‘ پڑھئے گا ضرور۔ آپ درخواست کریں گی تو ’’میاں‘‘ جی آنچل خرید کر لادیا کریں گے۔

ربیعہ شعیب… میرپورآزاد کشمیر
ربیعہ‘ دعا۔ کچھ الجھا الجھا سا خط موصول ہوا۔ عبارت سے حالات کو سمجھنے کی کوشش کی اور اس نتیجے پر پہنچے کہ جو کچھ مقدر میں اللہ نے تحریر کردیا ہے وہ ہو کر رہتا ہے۔ اور اللہ جو بھی کرتا ہے وہ بہتر ہی کرتا ہے۔ بہت دیر سے یہ بات سمجھ میں آتی ہے۔ شروع شروع میں مقدر کا لکھا سمجھ میں نہیں آتا۔ صبر سے کام لیں۔ اللہ تعالیٰ کی طرف سے انعامات کی بارش ہوجائے گی (انشاء اللہ )۔

شاہدہ صاعقی… ہارون آباد
شاہدہ بی بی‘ سلامت۔ آپ کی آمد سے خوشی حاصل ہوئی۔ آنچل پسند کرنے کا بہت شکریہ۔ سچی کہانیاں نہ لکھئے گا۔ آنچل میں سچی کہانیاں نہیں چھپتی ہیں۔ اپنی ذاتی کاوشوں پر انحصار کیجئے گا۔ آپ کی دعائوں کا شکریہ۔ اللہ تعالیٰ آپ کو اجر عطا فرمائے (آمین)۔

صبوحی وارثی … کراچی
صبوحی ڈیئر‘ خوش رہو۔ ہمیں جیسے ہی آپ کا خط ملا۔ فوراً جواب دے رہے ہیں۔ دعائوں کا شکریہ۔ اللہ تعالیٰ آپ کو سلامت رکھے (آمین)۔ صبا غوری کو آپ کی تشویش ان سطور کے ذریعے مل جائے گی۔ مناسب سمجھیں گی تو آپ کو خط لکھ دیں گی۔

نادیہ عابد
نادیہ ڈیئر۔ دعا۔ آئندہ خط لکھیں تو اپنے شہر کا نام لکھنا نہ بھولئے گا۔ آنچل پسند کرنے‘ ہمیں اور تمام رائٹرز کو دعا دینے کا از حد شکریہ۔ آپ سب چیزیں ایک ہی لفافے میں بھیج سکتی ہیں۔ البتہ تمام چیزیں الگ الگ صفحے پر لکھئے گا۔

نویدہ قدیر ندا…اسلام آباد
نویدہ ڈیئر‘ سلامت رہو۔ ہمیں تو یوں محسوس ہورہا تھا کہ جیسے پاکستان میں ہو ہی نہیں۔ اتنا طویل عرصہ غائب اور پھر خط بھی اس انداز میں لکھا ہے جیسے ہم بھولے بیٹھے ہیں۔ یا آپ پہلا خط لکھ رہی ہیں۔ بے ساختگی ہی غائب تھی خط میں۔ نہ آنے کی وجہ بھی نہیں لکھی۔ بہرطور‘ اب تو آہی گئی ہو۔ لہٰذا خوش آمدید(دوبارہ) آج کل کیا کیا مصروفیات ہیں۔ اسلام آباد تو ٹھنڈ اسے سکڑ پڑا ہے۔ کیا حال ہورہا ہوگا۔ اور یہ مونگ پھلی کھانے کا لکھ کر دل جلا دیا ہے۔ پتہ ہے جو بھی اسلام آباد جاتا ہے ہم مونگ پھلی کی ہی فرمائش کرتے ہیں۔

عزہ عروشہ … جلال پور جٹاں
عزہ بی بی‘ دعائیں۔ آپ کا آئینہ والا خط موصول ہوا۔ آنچل پسند کرنے اور پڑھنے کا شکریہ۔ چونکہ آپ نے خط اور آئینہ ایک ہی ورق پر لکھ ڈالا اس لئے آئینہ ضائع ہوگیا۔ آئندہ جو چیز بھی لکھیں الگ الگ صفحے پر لکھا کیجئے ورنہ ضائع ہوجائیں گی۔ سب رائٹرز کو آپ کی پسندیدگی اور مبارکباد پہنچا دی جائے گی۔

عابدہ سلیم …جھنگ
عابدہ ڈیئر۔ دعا۔ آنچل پسند کرنے کا شکریہ۔ آپ کا پہلا خط محبت بھرا تھا۔ اچھا لگا۔ عفت آپی سے کہہ دیا ہے کہ وہ زیادہ صفحات لکھیں۔ اب یہ اُن کے حالات پر منحصر ہے کہ وہ کیا اجازت دیتے ہیں۔ ننھی منی تخلیق کے ناز اٹھانا بھی تو ہیں۔ پھر بھی وہ اپنی سی کوشش کررہی ہیں۔ صفحات بڑھا دیں گی۔

حیا غوری … کراچی
حیا‘ پیار ہی پیار‘ دعائوں کے ساتھ۔ بغور خط پڑھا۔ آپ کی حالت سمجھنے کی کوشش بھی کی۔ آپ نے اپنے آپ کو پتھر کہا۔ مگر ہم ہیرا کہتے ہیں۔ ہم بھلا کیسے ہیرا بنا سکتے ہیں۔ پہلے ہم خود تو ہیرا بن جائیں۔ یہ تو آپ کی محبت اور عظمت ہے کہ ہمیں ہیرا سمجھتی ہیں ہم تو خود کو ابھی تک پتھر ہی سمجھتے ہیں۔ آپ کو کس قسم کی مدد اور تعاون چاہئے؟ یہ بات پورے خط میں موجود نہیں۔ اگر افسانہ نگاری شروع کرنا چاہتی ہیں تو لکھ ڈالئے۔ بھیج دیجئے۔ دیکھیں گے کہ ہم کس حد تک آپ کی رہنمائی کرسکتے ہیں۔

سمیرا بانو …فیصل آباد
سمیرا ڈیئر۔ سلامت۔ نظم اور خط موصول ہوا۔ آنچل پسند کرنے کا شکریہ۔ نظم بھی غزل ہی کی قسمت لے کر آئی ہے۔ چھپ نہیں سکتی۔ نظم ہی نہیں ہے۔ آزاد شاعری کے بھی کچھ آداب ہیں۔ ایک فن ہے پہلے نظم نگاری کا فن سیکھئے اس کے بعد نظم تحریر کیجئے۔

صائمہ … راولپنڈی
صائمہ ڈیئر۔ خوش رہو۔ آنچل کے لئے محبت بھرا خط موصول ہوا۔ افسوس آپ کے طلب کردہ آنچل فراہم نہیں کئے جاسکتے۔ ہمارے پاس تو نہیں ہیں۔ ہم کسی ایجنسی سے رجوع کرکے دیکھ لیں گے اگر ان کے پاس ہوئے تو آپ کو خط کے ذریعے اطلاع دے دی جائے گی۔ رقم بھی جب ہی بتائی جائے گی جب آنچل ملنے کی اُمید ہوجائے گی ورنہ صبر کے علاوہ کوئی چارہ نہیں۔ نا امید نہ ہوں۔ ہم آپ کے مطلوبہ پرچے فراہم کرنے کی کوشش ضرور کریں گے۔

جویریہ قمر … ایبٹ آباد
جویریہ ڈیئر۔ خوش رہو۔ آنچل پسند کرنے کا شکریہ۔ آپ کے ناول کے بارے میں اتنی جلد تو جواب نہیں دیا جاسکتا۔ ناقابل اشاعت میں بھی نظر ڈال لیجئے گا۔ جوابی لفافہ نہ بھیجا کیجئے۔ ہم ذاتی طور پر خطوط کے جوابات نہیں دیتے ہیں۔ یہ کالم کا سلسلہ جواب کے لئے ہی شروع کیا گیا ہے۔ اسی کالم میں جواب دیا جاتا ہے۔ آپ کی محبت اور دعائوں کا شکریہ۔ اللہ تعالیٰ آپ کو اس کا اجر عطا فرمائے (آمین)۔

طاہرہ اسلم …احمد پور سیال
طاہرہ بچی۔ دعا۔ پیار۔ دو دلوں والا خط موصول ہوا۔ بھئی ہمیں آپ کی بھیجی ہوئی کار بہت پسند آئی۔ روئی کی کار تھی۔ سردی زیادہ تھی۔ آگ جلا کر ہاتھ تاپنے میں بہت لطف آیا۔ شکریہ۔ ان تصوراتی زندگی کے علاوہ بھی کچھ کام کیا کرتی ہو یا نہیں۔ آئندہ خط میں اپنی مصروفیات لکھ کر بھیجنا۔

فوزیہ غزل …شیخو پورہ
فوزیہ ڈیئر۔ خوش رہو۔ ہم فوراً معلوم کرائیں گے کہ آپ کے چوتھے افسانے یا ناول کے بارے میں آپ کی شکایت جلد ہی دور کردی جائے گی۔ یہ کہنا بالکل درست ہے کہ پڑھنے والوں کی تعریف اور محبت اصل اعزاز ہے۔ اعزاز یہ کی اس کے آگے کوئی حیثیت نہیں۔ بہت سے لوگ بہت فراخ دل ہوتے ہیں۔ وہ اپنے لفظوں کی قیمت نہیں لگاتے بلکہ لوگوں کے دلوں میں جگہ بناتے ہیں۔ بہرطور آپ کی شکایت دور کردی جائے گی۔ بشرطیکہ آپ کی چوتھی تحریر موجود ہو۔ رجسٹر چیک کرلیں گے۔

رمشا احمد … کراچی
رمشا‘ پیار۔ آپ کی محبت کا بہت شکریہ۔ بہت پیارا سا‘ معصوم خط لکھا ہے۔ پسند آیا۔ آپ ہمیں‘ دفتر کے فون پر مخاطب کرسکتی ہیں۔ مائنڈ نہ کیجئے ہم گھرکا نمبر نہیں دیتے ہیں۔ نہ کوئی کال ریسیو کرتے ہیں۔ ہم فون سے بہت دور‘ اپنے کام میں اتنے منہمک ہوتے ہیں کہ فون ریسیو ہی نہیں کرتے۔ گھر کا‘ دفتر کا نہیں۔

امبر گل …جھڈو
شکایت بھرا خط موصول ہوا۔ حالانکہ بہنوں نے ہماری مصروفیات کے پیش نظر اب ہم سے شکایت کرنا چھوڑ دی ہے۔ ورنہ پورا کالم شکایت نامہ ہوا کرتا تھا۔ ہم خالہ جانی ہیں تو بس خالہ جانی ہیں۔ حقیقی‘ غیر حقیقی کے چکر میں ہم نہیں پڑتے۔ محرومی کسی بھی قسم کی ہو دکھ تو دیتی ہے لیکن انسان بالآخر ہر دکھ کا عادی ہو ہی جاتا ہے۔ اور صبر کرلیتا ہے۔ آپ کی سفارش کردی جائے گی۔ اب خوش ؟

آستر …جادو نگری
آستر‘ دعا۔ پہلے یہ بتائیے کہ اپنے شہر کا نام آپ نے خود رکھا ہے یا واقعی یہ نام اصل ہے چونکہ ابھی تک ’’جادونگری‘‘ کے نام سے کوئی خط موصول نہیں ہوا۔ فی الحال آپ کہانی نہ بھیجئے۔ ہمیں پڑھنے کی فرصت نہیں۔ نہ اس مخمسے میں پڑیئے کہ قسط وار ناول کی قسطوں کی رقم کتنی ہوتی ہے ؟ آپ کی شاعری پڑھ لی۔

مریم افتخار … منڈیلاچٹھہ
مریم۔ دعا۔ خط مل گیا۔ بلکہ خط کو ہدایت نامہ کہنا چاہئے۔ آپ کی ہدایات غور سے پڑھیں۔ کوشش کریں گے کہ شکایات دور ہوجائیں۔ ہم پتے اور فون نمبر کسی کے نہیں چھاپتے۔ سدرہ سحر اور مریم شاہ کو ان سطور کے ذریعے آپ کی خواہش پتہ چل جائے گی کہ آپ ان سے دوستی کرنا چاہتی ہیں۔

اسماء سحر…کراچی
اسماء‘ڈیئر۔ خوش رہو۔ افسانے کا نام ناقابل اشاعت میں دیکھ لیجئے گا۔ غزل ابھی غزل نہیں بنی۔ کسی سے اصلاح لے لیا کیجئے۔ یہی حال نظم کا ہے۔ ہمیں امید ہے آپ مائنڈ کئے بغیر معذرت قبول کریں گی۔ اللہ تعالیٰ سے دعا ہے کہ آپ کی جملہ پریشانیاں دور فرمادے (آمین)۔

سمیرا شریف طور … گوجرانوالہ
سمیرا ڈیئر‘ دعا۔ ناول مل گیا۔ آپ سے ہرگز امید نہ تھی کہ ہماری مجبوریاں جانتے ہوئے بھی طویل کہانی لکھیں گی۔ کیا فائدہ کہ رکھی ہیں اور چھپنے کے انتظار میں آپ اذیت اٹھاتی رہیں۔ اب دیکھئے جگہ ہوگی تو چھاپیں گے۔ اگلا پرچہ ناول نمبر نکال رہے ہیں۔ شاید اسی میں جگہ پاجائے ورنہ پھر انتظار۔ طویل خط میں جو باتیں آپ نے تحریر فرمائی ہیں ان کے لئے اللہ تعالیٰ سے دعا کرتے ہیں کہ آپ کے تمام دکھ سکھ میں تبدیل ہوجائیں (آمین)۔

سائرہ مریم
سائرہ‘ دعا۔ آپ کے خط کا جواب حاضر ہے۔ ارے بھئی اتنا چیخا نہ کیجئے۔ محلے والے ڈر جائیں گے۔ عفت آپی‘ اقراء آپی اور نازیہ کنول آپی کو بہت زیادہ تعریف پہنچا دی جائے گی۔ بھائی کی شادی کا احوال چھپ جائے گا۔ آنچل پسند کرنے اور دعائیں دینے کا شکریہ۔ اللہ آپ کی عمر دراز کرے (آمین)۔

سعدیہ عابد
سعدیہ‘ دعا۔ خط میں آئندہ اپنے شہر کا نام ضرور لکھا کیجئے۔ گھبرایا‘ گھبرایا خط موصول ہوا۔ جیسے گاڑی چھوٹی جارہی ہے جو کچھ لکھنا ہے جلد لکھ ڈالو۔ آنچل پسند کرنے‘ تعریف کرنے کا شکریہ۔ آپ کی نظم اور افسانے کے بارے میں آپ کو در جواب آں کی آخری سطور میں خبر مل جائے گی۔ نظم بھی فی الحال بھول جائو۔ وہ تو شعبے والوں کی ذمہ داری ہے۔ ہمارا اس سے کوئی تعلق نہیں۔

حکیم شبیر احمد …سرگودھا
برادر‘ سلامت۔ مختلف اوقات میں آپ کے تین عدد خطوط موصول ہوئے۔ جن سے حالات پیش آمدہ کی اطلاعات موصول ہوتی رہیں۔ اللہ تعالیٰ‘ آپ پر کرم و فضل عطا فرمائے اور جملہ پریشانیوں سے نجات دے (آمین) سب چیزیں مل گئی ہیں۔ وقتاً فوقتاً چھپتی رہیں گی (انشاء اللہ) طاہر میاں سے کہہ دیا جائے گا۔ اعزازی پرچہ جاری کردیں۔ مضامین لکھتے وقت یہ ضرور خیال رکھا کیجئے کہ خواتین کا پرچہ ہے جسے نوعمر لڑکیاں بھی پڑھتی ہیں۔ لہٰذا ایسی دوائیں یا مشروبات وغیرہ نہ لکھیں جو اُن کی سمجھ میں نہ آئیں۔ ہمیں کچھ کاٹنا بھی پڑجاتا ہے۔ حالات کی مناسبت سے ’’سلگتے موسم‘‘ نام اچھا ہے۔

مریم ماہ منیر…لاہور
مریم بی بی‘ دعائیں۔ بہت عرصہ بعد تشریف لائیں۔ ہم بھولے نہیں تھے۔ آپ کی نظم‘ غزل تو شعبے کے پاس جائے گی۔ چھپتی رہی ہیں تو اب بھی چھپتی رہیں گی۔ اتنی طویل غیر حاضری اچھی تو نہیں۔ امید ہے آئندہ جلد جلد تشریف لاتی رہیں گی اور دعائوں میں یا درکھیں گی۔

صبیحہ عامر …سرگودھا
صبیحہ جی۔ دعا۔ آپ خود ہی تو اپنے لئے دیر کا سامان کرتی ہیں۔ جب 200 سے بھی زیادہ صفحات کا ناول لکھ کر بھیجیں گی تو کہاں جگہ ملے گی۔ جبکہ ہم نے ایک لائن چھوڑ کر 80 صفحات کی حد بندی بھی کردی ہے۔ اس کے چھپنے کے انتظار سے اچھا ہے کہ آپ دوسرے افسانے یا ناول بھیج دیجئے۔ جوبہ آسانی جگہ پاسکیں

ناقابل اشاعت
لمحۂ محبت‘ سچے جذبے کی سچی محبت‘ پھر زندگی مسکرائی‘ پیار‘ خلوص‘ اور دوستی‘ تاروں بھری شام‘ محبت کی جیت‘ پاگل محبت‘ عید ملن‘ رستے تیرے کہیں نہیں ملتے۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Check Also

Close
Back to top button
error: Content is protected !!
×
Close